உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    UP News: اکھلیش یادو اور اعظم خان نے پارلیمنٹ کی رکنیت سے دیا استعفی، جانئے پورا معاملہ

    UP News: اکھلیش یادو اور اعظم خان نے پارلیمنٹ کی رکنیت سے دیا استعفی، جانئے پورا معاملہ

    UP News: اکھلیش یادو اور اعظم خان نے پارلیمنٹ کی رکنیت سے دیا استعفی، جانئے پورا معاملہ

    سماج وادی پارٹی کے سربراہ اکھلیش یادو نے اعظم گڑھ لوک سبھا سیٹ سے استعفیٰ دے دیا ہے۔ حال ہی میں ہوئے یوپی اسمبلی انتخابات میں انہوں نے کرہل اسمبلی سیٹ سے ایم ایل اے کا انتخاب جیتا تھا ، جس کے بعد یہ قیاس آرائی کی جارہی تھی کہ وہ اسمبلی کی رکنیت چھوڑ دیں گے یا ایم پی کے عہدے سے استعفیٰ دیں گے۔

    • Share this:
      لکھنؤ : سماج وادی پارٹی کے سربراہ اکھلیش یادو نے اعظم گڑھ لوک سبھا سیٹ سے استعفیٰ دے دیا ہے۔ حال ہی میں ہوئے یوپی اسمبلی انتخابات میں انہوں نے کرہل اسمبلی سیٹ سے ایم ایل اے کا انتخاب جیتا تھا ، جس کے بعد یہ قیاس آرائی کی جارہی تھی کہ وہ اسمبلی کی رکنیت چھوڑ دیں گے یا ایم پی کے عہدے سے استعفیٰ دیں گے۔ تاہم اب یہ تذبذب ختم ہو گیا ہے ۔ ایس پی سپریمو اکھلیش یادو منگل کی دوپہر لوک سبھا پہنچے، جہاں انہوں نے اسپیکر اوم برلا سے ملاقات کی اور اپنا استعفیٰ پیش کیا ۔

       

      یہ بھی پڑھئے : مغربی بنگال کے بیربھوم میں پنچایت لیڈر کے قتل کے بعد 8 لوگوں کو زندہ جلایا گیا، جانئے پورا معاملہ


      اکھلیش یادو کے علاوہ سماج وادی پارٹی کے سینئر لیڈر اعظم خان نے بھی لوک سبھا کی رکنیت سے استعفیٰ دے دیا۔ وہ حالیہ اسمبلی انتخابات میں رام پور سیٹ سے منتخب ہوئے تھے۔ ایسے میں انہوں نے اپنی اسمبلی کی رکنیت کو برقرار رکھنے کا فیصلہ کیا ہے ۔ اکھلیش یادو اور اعظم خان کے لوک سبھا کی رکنیت سے استعفیٰ دینے کے بعد اب ان دونوں سیٹوں پر 6 ماہ کے اندر ضمنی انتخابات کرائے جائیں گے ۔

       

      یہ بھی پڑھئے : فلم انڈسٹری کو صدمہ، اس مشہور اداکارہ کی جان کا دشمن بن گیا 'ہولی کا جشن'، دردناک حادثہ میں ہوئی موت


      پارلیمنٹ کی رکنیت سے استعفی دینے سے پہلے اکھلیش یادو پیر کو اعظم گڑھ پہنچے تھے، جہاں انہوں نے پارٹی کے سینئر لیڈروں اور کارکنوں سے ملاقات کی تھی ۔ اعظم گڑھ یا کرہل کی سیٹ چھوڑنے کے سوال پر سابق وزیر اعلی اکھلیش یادو نے کہا تھا کہ پارٹی لیڈروں سے ملاقات کے بعد فیصلہ کیا جائے گا ۔

      اس دوران انہوں نے میڈیا سے ہی سوال کرلیا تھا کہ 'آپ بتائیں میں کیا کروں؟' انہوں نے کہا تھا کہ لیڈروں اور کارکنوں نے اپنی رائے دے دی ہے، اب آگے کا فیصلہ پارٹی کرے گی ۔
      Published by:Imtiyaz Saqibe
      First published: