உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    UP Election Results 2022: ابتدائی رجحانات میں بی جے پی آگے ، ایس پی دوسرے نمبر پر

    یوپی اسمبلی انتخابات کے نتائج 2022 : کیا سب سے بڑی انتخابی ریاست اتر پردیش میں ایک بار پھر بی جے پی کی حکومت بنے گی یا اکھلیش یادو کی سماج وادی پارٹی پلٹ وار کرے گی؟ یا پھر کانگریس یا بی ایس پی کوئی کرشمہ دکھائے گی؟ کچھ گھنٹوں کے بعد ان سوالات کے جواب مل جائیں گے ۔

    یوپی اسمبلی انتخابات کے نتائج 2022 : کیا سب سے بڑی انتخابی ریاست اتر پردیش میں ایک بار پھر بی جے پی کی حکومت بنے گی یا اکھلیش یادو کی سماج وادی پارٹی پلٹ وار کرے گی؟ یا پھر کانگریس یا بی ایس پی کوئی کرشمہ دکھائے گی؟ کچھ گھنٹوں کے بعد ان سوالات کے جواب مل جائیں گے ۔

    یوپی اسمبلی انتخابات کے نتائج 2022 : کیا سب سے بڑی انتخابی ریاست اتر پردیش میں ایک بار پھر بی جے پی کی حکومت بنے گی یا اکھلیش یادو کی سماج وادی پارٹی پلٹ وار کرے گی؟ یا پھر کانگریس یا بی ایس پی کوئی کرشمہ دکھائے گی؟ کچھ گھنٹوں کے بعد ان سوالات کے جواب مل جائیں گے ۔

    • Share this:
      اترپردیش اسمبلی انتخابات کیلئے ووٹوں کی گنی کا عمل شروع ہوگیا ہے اور ابتدائی رحجانات بھی آنے لگے ہیں ۔ کیا سب سے بڑی انتخابی ریاست اتر پردیش میں ایک بار پھر بی جے پی کی حکومت بنے گی یا اکھلیش یادو کی سماج وادی پارٹی پلٹ وار کرے گی؟ یا پھر کانگریس یا بی ایس پی کوئی کرشمہ دکھائے گی؟ کچھ گھنٹوں کے بعد ان سوالات کے جواب مل جائیں گے ۔ ووٹوں کی گتنی کی تمام تیاریاں مکمل کرلی گئی ہیں اور کچھ ہی گھنٹوں کے بعد کاونٹنگ کا عمل شروع ہوجائے گا ۔

      وہیں اگر حتمی نتائج سے پہلے آئے ایگزٹ پولز پر نظر ڈالیں تو زیادہ تر ایجنسیوں کے ایگزٹ پولز میں بتایا گیا ہے کہ کہ یوپی میں ایک مرتبہ پھر سے بی جے پی کی سرکار بن سکتی ہے ۔ اترپردیش کیلئے جاری سات ایگزٹ پولز کی مانیں تو یوپی میں ایک مرتبہ پھر بی جے پی سرکار بننے جارہی ہے ۔ ان ایگزٹ پول میں ایس پی کو پچھلی مرتبہ کے مقابلہ میں کافی فائدہ ہوتا نظر آرہا ہے ۔ بتادیں کہ ایگزٹ پولس ووٹنگ کے دوران ہوئے سروے پر مبنی ہوتے ہیں اور اس کے نتائج کو حتمی نہیں مانا جاسکتا ہے ۔ کافی مواقع پر ایسا ہوا ہے جس میں انتخابی نتائج ، ایگزٹ پولس کے بالکل برعکس آئے ہیں ۔

      یہاں دیکھئے ہر اپ ڈیٹ

      اترپردیش میں ووٹوں کی گنتی شروع ہوگئی ہے ۔ ابتدائی رجحانات میں بی جے پی ، ایس پی سے کافی آگے چل رہی ہے ۔

      اتر پردیش میں 403 اسمبلی حلقوں میں سب سے زیادہ 750 سے زیادہ کاؤنٹنگ ہال بنائے گئے ہیں۔ اس کے بعد پنجاب میں 200 سے زائد کاؤنٹنگ ہالز میں رائے شماری کا عمل مکمل کاجائیگا۔

      اس عمل کی نگرانی کے لیے پانچ ریاستوں میں 650 سے زیادہ مبصرین کو تعینات کیا گیا ہے۔ اس سلسلے میں ایک اہلکار نے لکھنؤ میں بتایا کہ یوپی کے تمام گنتی مراکز پر ویڈیو اور اسٹیشنری کیمرے نصب کر دیے گئے ہیں۔

      Assembly Election Results 2022: سخت سیکورٹی کےدرمیان5ریاستوں میں صبح8بجےشروع ہوگی ووٹوں کی گنتی، پھر آئیں گے رحجانات


      پولیس نے کہا کہ 10 مارچ کے لیے، اتر پردیش کے تمام اضلاع اور کمشنریٹس کو CAPFs (سنٹرل آرمڈ پولیس فورسز) کی کل 250 کمپنیاں فراہم کی گئی ہیں۔ حکام کے مطابق، عام طور پر ایک CAPF کمپنی میں تقریباً 70-80 اہلکار ہوتے ہیں۔


      اگر بی جے پی 403 رکنی اسمبلی میں اکثریت حاصل کر لیتی ہے تو یہ گزشتہ تین دہائیوں میں پہلی بار ہو گا کہ بی جے پی لگاتار دوسری بار اترپردیش حکومت بنائے گی۔ بی جے پی کی یوپی یونٹ کے ترجمان راکیش ترپاٹھی نے کہا، "یوپی بی جے پی کے دفتر میں کوئی خاص تیاری نہیں ہے، لیکن پارٹی کارکنوں میں جوش و خروش ہے۔"

      منگل کو، سماج وادی پارٹی (ایس پی) کے سربراہ اکھلیش یادو نے الزام لگایا تھا کہ وارانسی میں ایک ٹرک میں ای وی ایم کو "چھپاکر"لے جایا جا رہا تھا لیکن الیکشن کمیشن نے کہا تھا کہ مشینیں گنتی کے فرائض پر افسران کو تربیت دینے کے لیے تھیں۔
      Published by:Imtiyaz Saqibe
      First published: