ہوم » نیوز » وطن نامہ

Uttarakhand Glacier Burst : پوری رات چلا ریسکیو آپریشن ، ابھی بھی 170 افراد لاپتہ ، 14 لاشیں برآمد

اتراکھنڈ کے چمولی ضلع میں اتوار کے روزگلیشیئر دھنسنے کے پیش آنے والے قدرتی حادثے میں اب تک 150 لوگ لاپتہ ہیں اور 14 لوگوں کی لاشیں برآمد کی جاچکی ہیں ۔

  • Share this:
Uttarakhand Glacier Burst : پوری رات چلا ریسکیو آپریشن ، ابھی بھی 170 افراد لاپتہ ، 14 لاشیں برآمد
اب ک کل 15 افراد کو ریسکیو کیا گیا ہے اور الگ الگ مقامات سے 14 لاشیں برآمد کی گئی ہیں ۔

اتراکھنڈ کے چمولی ضلع میں اتوار کے روزگلیشیئر دھنسنے کے پیش آنے والے قدرتی حادثے میں اب تک 170 لوگ لاپتہ ہیں اور 14 لوگوں کی لاشیں برآمد کی جاچکی ہیں ۔ آئی ٹی بی پی کے ترجمان وویک پانڈے نے ریسکیو آپریشن کے بارے میں جانکاری دیتے ہوئے کہا کہ ہماری ٹیم نے دوسری ٹنل میں راحت اور بچاو کام تیز کریا ہے ۔ ہمیں جانکاری ہے کہ تقریبا تیس افراد وہاں پھنسے ہوسکتے ہیں ۔ ایک ٹنل کو صاف کرنے کیلئے تقریب تین سو آئی ٹی بی پی کے جوان لگائے گئے ہیں ۔


چمولی پولیس نے ٹویٹ کرکے بتایا کہ ٹنل میں پھنسے لوگوں کیلئے بچاو اور راحت کے کام جاری ہیں ۔ جے سی بی کی مدد سے ٹنل کے اندر پہنچ کر راستہ کھولنے کی کوشش کی جارہی ہے ۔ اب ک کل 15 افراد کو ریسکیو کیا گیا ہے اور الگ الگ مقامات سے 14 لاشیں برآمد کی گئی ہیں ۔




اتراکھنڈ کے چمولی ضلع میں گلیشیئر ٹوٹنے سے بڑی تباہی ہوئی ہے۔ اس کے سبب الکنندا اور دھولی گنگا طغیانی پر ہیں۔ رشی گنگا دریا پر پاور پروجیکٹ کے ڈیم کا ایک حصہ ٹوٹ گیا ہے۔ گلیشیئر کے ٹوٹنے سے بڑی تباہی کا خدشہ ظاہر کیا جارہا ہے، جس کے پیش نظر انتظامیہ پوری طرح سے الرٹ پر ہے۔



گلیشئئر ٹوٹنے کی وجہ سے الکنندا میں پانی کا بہاؤ کافی بڑھ گیا ہے۔ پانی کے تیز بہاؤ میں کئی گھروں کے بہہ جانے کا خدشہ ہے۔آس پاس کے علاقے خالی کرائے جارہے ہیں۔ لوگوں سے محفوظ مقامات پر جانے کی اپیل کی جارہی ہے۔
Published by: Imtiyaz Saqibe
First published: Feb 08, 2021 08:51 AM IST