ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

کشمیر: ریاض نائیکو کی ہلاکت کے خلاف پُرتشدد احتجاج، ایک شہری ہلاک

وادی کے سبھی دس اضلاع میں موبائل فون اور انٹرنیٹ خدمات جمعرات کو مسلسل دوسرے دن بھی منقطع رکھی گئیں جس کی وجہ سے اہلیان وادی کو گونا گوں مشکلات کا سامنا کرنا پڑرہا ہے۔

  • UNI
  • Last Updated: May 07, 2020 09:25 PM IST
  • Share this:
کشمیر: ریاض نائیکو کی ہلاکت کے خلاف پُرتشدد احتجاج، ایک شہری ہلاک
حزب المجاہدین کے کمانڈر ریاض نائیکو اور اس کے دو ساتھیوں کو سیکورٹی اہلکاروں نے بدھ کو ہوئی مڈبھیڑ میں ہلاک کردیا تھا۔

سری نگر: وادی کشمیر میں حزب المجاہدین کے آپریشنل کمانڈر ریاض نائیکو سمیت 4 جنگجوئوں کی ہلاکت کے بعد ضلع پلوامہ میں احتجاجیوں کی سیکورٹی فورسزکے ساتھ ہونے والی جھڑپوں میں ایک عام شہرک ہلاک جبکہ کم ازکم دیگر دو درجن زخمی ہوگئے ہیں۔ زخمیوں میں سیکورٹی فورسزکے اہلکار بھی شامل ہیں۔ وادی کے سبھی 10 اضلاع میں موبائل فون اور انٹرنیٹ خدمات جمعرات کو مسلسل دوسرے دن بھی منقطع رکھی گئیں جس کی وجہ سے اہلیان وادی کو گونا گوں مشکلات کا سامنا کرنا پڑرہا ہے۔


کشمیر زون پولیس کے انسپکٹرجنرل وجےکمار کے مطابق بدھ کو مواصلاتی خدمات منقطع کرنا ضروری بن گیا تھا اور یہ خدمات صورتحال میں بہتری آنے کے ساتھ ہی بحال کردی جائیں گی۔ مواصلاتی خدمات منقطع رکھنے کے علاوہ جمعرات کو بھی جنوبی کشمیر اور سری نگر میں سخت سیکورٹی پابندیاں عائد رہیں۔ اس کے علاوہ تمام حساس علاقوں میں سیکورٹی فورسزکی اضافی نفری تعینات کی گئی تھی۔ تاہم باوجود اس کے پلوامہ میں کچھ جگہوں پر مقامی نوجوانوں کی سیکورٹی فورسز کے ساتھ جھڑپیں ہوئیں۔ اس دوران ایک مقامی خبر رساں ایجنسی نے ذرائع کےحوالے سےکہا ہےکہ بدھ کو پلوامہ میں دو الگ الگ جنگجو مخالف آپریشنز میں مارے گئے. چاروں جنگجووں کو جمعرات کے روز وسطی ضلع گاندربل کے سونہ مرگ میں واقع ایک قبرستان میں سپرد خاک کیا گیا۔ تدفین کا عمل ایک مجسٹریٹ کی موجودگی میں انجام دیا گیا ہے۔

مقامی میڈیا کی خبروں کے مطابق ضلع پلوامہ میں بدھ کو ریاض نائیکو کی ہلاکت کےخلاف کئی جگہوں بالخصوص بیگ پورہ میں احتجاجیوں کی سیکورٹی فورسز کےساتھ شدید جھڑپیں ہوئیں۔ ان جھڑپوں میں ایک عام شہری ہلاک جبکہ کم از کم دیگر دو درجن زخمی ہوگئے ہیں۔ مہلوک عام شہری کی شناخت 32 سالہ جہانگیر یوسف وانی ولد محمد یوسف ساکنہ اٹھمولہ کے طور پر ہوئی ہے۔ جہانگیرکے پسماندگان میں بیوہ اوردو بچے ہیں۔

ایک رپورٹ کے مطابق جہانگیر یوسف کو گولی گردن میں لگی، جس کی وجہ سے اس کی موقع پر ہی موت واقع ہوئی۔ تاہم ایک اور رپورٹ میں ایک سینئر ڈاکٹر کےحوالے سےکہا گیا ہےکہ جہانگیر کو کئی گولیاں لگی تھیں اور اس کو اسپتال مردہ لایا گیا تھا۔ موصولہ اطلاعات کے مطابق جہانگیر یوسف کی ہلاکت کی خبر اس وجہ سے فوری طور پر سامنے نہیں آئی کیونکہ لواحقین کو خدشہ تھا کہ اگر پولیس کو معلوم چل گیا تو وہ لاش کو دورکسی قبرستان میں دفنائیں گے۔ پولیس کی طرف سے بھی اس ضمن میں یہ رپورٹ فائل کئےجانےتک کوئی بیان سامنےنہیں آیا تھا۔

تاہم ایک اور رپورٹ کے مطابق وادی میں مواصلاتی خدمات پر جاری پابندی کی وجہ سے بھی یہ خبر تاخیر سے سامنے آئی۔ اس رپورٹ کے مطابق ضلع پولیس و سول انتظامیہ شہری کی ہلاکت کی خبر سے پہلے ہی باخبرتھی۔ بتادیں کہ ضلع پلوامہ میں بدھ کو دو الگ الگ علاقوں میں ہونے والے دو مختلف جنگجو مخالف آپریشنز میں حزب المجاہدین کے آپریشنل کمانڈر ریاض نائیکو سمیت 4 جنگجوئوں کو ہلاک کیا گیا۔ جہاں سیکورٹی فورسز نے ریاض نائیکو کی ہلاکت کو ایک بڑی کامیابی سے تعبیر کیا ہے۔ وہیں یہ وادی کشمیر میں سرگرم جنگجوئوں اوران کی تنظیموں کےلئے ایک بہت بڑا نقصان ہے۔

First published: May 07, 2020 09:25 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading