உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    لوک سبھا انتخابات کی سیاست زوروں عروج پر،بنگلورو میں پرکاش راج اورضمیراحمد خان کے درمیان لفظی جھڑپ

    ضمیراحمد خان نے پرکاش راج کے اچانک سیاست میں قدم رکھنےپراٹھائےسوالات

    ضمیراحمد خان نے پرکاش راج کے اچانک سیاست میں قدم رکھنےپراٹھائےسوالات

    ضمیراحمد خان نے پرکاش راج کے اچانک سیاست میں قدم رکھنےپراٹھائےسوالات

    • Share this:
      کرناٹک میں بنگلورو سینٹرل لوک سبھا کی سیٹ پرکانگریس اور بی جے پی کی نظریں ہیں۔اس سیٹ سے بی جے پی نے موجودہ رکن پارلیمنٹ پی سی موہن کو دوبارہ ٹکٹ دیاہے۔ وہیں
      کانگریس نے راضون ارشد کودوبارہ میدان میں اتاراہے۔جبکہ معروف اداکارپرکاش راج اس لوک سبھا سیٹ سے آزاد امیدوار کی حیثیت سے قسمت آزمارہے ہیں۔ پرکاش راج کانگریس اور بی جے پی پرتقسیم کی سیاست کرنے کاالزام لگارہے ہیں۔

      لوک سبھاالیکشن میں لیڈروں کے درمیان لفظی جھڑپ بھی دیکھنے کو مل رہی ہے۔بنگلورو میں آزاد امیدواراورمعروف فلم ایکٹرپرکاش راج نے کانگریس کے لیڈروں کوزبردست تنقید کانشانہ بنایاتودوسری جانب کانگریس کے لیڈرضمیراحمد خان نے کہاکہ عوام پرکاش راج کوووٹ نہیں ٹھینگا دینگے۔ پرکاش راج دو چارہزارسے زائد ووٹ نہیں لینگے۔

      سیاست میں ایک دوسرے پرالزام لگانے کوئی نہیں بعدنہیں ہے۔ آنے والاوقت ہی بتائے گا کے پارلیمانی حلقہ بنگلوروسینٹرل کے عوام کس پربھروسہ کرتے ہیں۔

      بنگلوروسے راؤف احمد ہلور کی رپورٹ ۔۔۔

       
      First published: