உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    مغربی بنگال: TMC کے 3 کارکنان کاگولی مارکر قتل، علاقے میں بڑی تعدادمیں پولیس اہلکار تعینات

    مغربی بنگال میں جنوب 24 پرگنہ ضلع کے کیننگ میں جمعرات کی صبح نامعلوم بدمعاشوں نے برسراقتدار ترنمول کانگریس کے تین کارکنان کا اس وقت قتل کردیا، جب وہ بھیڑ بھاڑ والی سڑک سے گزر رہے تھے۔ پولیس نے یہ جانکاری دی۔

    مغربی بنگال میں جنوب 24 پرگنہ ضلع کے کیننگ میں جمعرات کی صبح نامعلوم بدمعاشوں نے برسراقتدار ترنمول کانگریس کے تین کارکنان کا اس وقت قتل کردیا، جب وہ بھیڑ بھاڑ والی سڑک سے گزر رہے تھے۔ پولیس نے یہ جانکاری دی۔

    مغربی بنگال میں جنوب 24 پرگنہ ضلع کے کیننگ میں جمعرات کی صبح نامعلوم بدمعاشوں نے برسراقتدار ترنمول کانگریس کے تین کارکنان کا اس وقت قتل کردیا، جب وہ بھیڑ بھاڑ والی سڑک سے گزر رہے تھے۔ پولیس نے یہ جانکاری دی۔

    • Share this:
      کیننگ: مغربی بنگال میں جنوب 24 پرگنہ ضلع کے کیننگ میں جمعرات کی صبح نامعلوم بدمعاشوں نے برسراقتدار ترنمول کانگریس کے تین کارکنان کا اس وقت قتل کردیا، جب وہ بھیڑ بھاڑ والی سڑک سے گزر رہے تھے۔ پولیس نے یہ جانکاری دی۔

      پولیس کی ایک سینئر افسر نے بتایا کہ تینوں کارکنان موٹر سائیکل سے کیننگ کے دھرم تلا جا رہے تھے۔ انہوں نے بتایا کہ اسی دوران صبح نو بجے کے آس پاس نامعلوم حملہ آوروں نے انیہں پیر پارک کے قریب روکا اور گولی مار کر ان کا قتل کردیا۔

      انہوں نے کہا کہ مہلوکین کی شناخت مقامی پنچایت رکن اسوپن ماجھی اور ان کے دو معاونین بھوت ناتھ پرمانک اور جھنٹو ماجھی کے طور پر کی گئی ہے۔

      افسر کے مطابق، اس بات کا خدشہ ہے کہ بدمعاشوں نے پہلے اسوپن کو گولی ماری تھی اور اس کے بعد دیگر دونوں لوگوں کو۔ پولیس نے بتایا کہ دو کا قتل اس لئے کئے جانے کا خدشہ ہے کیونکہ وہ ‘قتل کے گواہ ہوسکتے تھے‘۔

      یہ بھی پڑھیں۔

       دہلی میں تشدد: کینڈل مارچ کر رہی بھیڑ ہوئی بے قابو، پولیس پر پتھراو، گاڑیوں میں توڑ پھوڑ

      انہوں نے کہا، ’قاتلوں نے جائے حادثہ سے بھاگنے سے پہلے تینوں پر دھار دار ہتھیاروں سے حملہ کیا تاکہ یہ یقینی ہوسکے کہ ان کی موت ہوچکی ہے‘۔ افسر نے کہا کہ حادثہ کے بعد علاقے میں بڑی تعداد میں پولیس اہلکاروں کو تعینات کیا گیا ہے۔

      انہوں نے بتایا کہ موقع سے گولی کے تین کھوکھے، ایک بم اور ایک موٹر سائیکل برآمد ہوئی ہے۔ انہوں نے کہا، ’روایتی جانچ سے پتہ چلتا ہے کہ یہ حادثہ ذاتی دشمنی کا نتیجہ تھا‘۔
      Published by:Nisar Ahmad
      First published: