ہوم » نیوز » مغربی ہندوستان

عدم رواداری کی مخالفت میں سعید مرزا سمیت 24 فلم سازوں نے ایوارڈ واپس کرنے کا اعلان کیا

نئی دہلی۔ ملک میں عدم رواداری بڑھنے کا الزام لگاتے ہوئے معروف فلم ڈائریکٹر سعید مرزا، اروندھتی رائے اور کندن شاہ سمیت 24 فلم سازوں نے آج اپنے قومی فلم ایوارڈ واپس کرنے کا اعلان کیا ہے۔

  • UNI
  • Last Updated: Nov 05, 2015 07:06 PM IST
  • Share this:
  • author image
    NEWS18-Urdu
عدم رواداری کی مخالفت میں سعید مرزا سمیت 24 فلم سازوں نے ایوارڈ واپس کرنے کا اعلان کیا
نئی دہلی۔ ملک میں عدم رواداری بڑھنے کا الزام لگاتے ہوئے معروف فلم ڈائریکٹر سعید مرزا، اروندھتی رائے اور کندن شاہ سمیت 24 فلم سازوں نے آج اپنے قومی فلم ایوارڈ واپس کرنے کا اعلان کیا ہے۔

نئی دہلی۔  ملک میں عدم رواداری بڑھنے کا الزام لگاتے ہوئے معروف فلم ڈائریکٹر سعید مرزا، اروندھتی رائے اور کندن شاہ سمیت 24 فلم سازوں نے آج اپنے قومی فلم ایوارڈ واپس کرنے کا اعلان کیا ہے۔ ان فلم سازوں نے ممبئی میں پریس کانفرنس میں یہ اعلان کیا۔ اس سے پہلے معروف فلم ساز آنند پٹورددھن سمیت 12 فلمساز اپنے ایوارڈ واپس کر چکے ہیں۔


ہندی کے کہانی کار ادے پرکاش کی طرف سے دو ماہ پہلے ساہتیہ اکیڈمی ایوارڈ واپس کئے جانے کے واقعہ کے بعد سے مصنفین، فنکاروں، سائنسدانوں، تھیٹر سے منسلک شخصیات، مورخین کے احتجاج کا سلسلہ اب بھی جاری ہے۔ فلم اداکار گجیندر چوہان کو فلم اور ٹیلی ویژن انسٹی ٹیوٹ پونے کا سربراہ بنائے جانے سے ناراض یہ فلم ساز معروف فلم اداکار شاہ رخ خان کو کچھ لوگوں کی طرف سے غدار کہے جانے سے بھی نالاں ہیں۔


انعام لوٹانےوالو میں اروندھتی رائے، سنجے کاک، تپن بوس، پردیپ کرشنا، سدھاکر ریڈی، انور جمال، امیتابھ چکرورتی، رنجن پالت، شری پرکاش، رفیق الیاس، وویک سچدانند، ابھیمنیو ڈانگے، منوج لوبو،ترون بھارتی، مدھوشري دتہ، اجے رینا ، آئی ڈی ملک، پی ایم ستیش، وریندر سینی، سدھیر پلسانے، ڈاکٹر منوج نتھروال اور ستيہ رائے ناگپال بھی شامل ہیں۔


First published: Nov 05, 2015 07:06 PM IST