ہوم » نیوز » مغربی ہندوستان

 سشانت سنگھ راجپوت خودکشی معاملہ میں ممبئی پولیس کو بدنام کرنے کیلئے بیرون ملک میں فرضی اکاؤنٹ بنائے گئے : پولیس کمشنر

پولیس کا دعویٰ ہے کہ ممبئی پولیس کی تحقیقات اور مہاراشٹر حکومت کو بدنام کرنے کے لئے 80000 سے زیادہ جعلی سوشل میڈیا اکاؤنٹ بنائے گئے تھے ۔ اس معاملہ میں ممبئی پولیس کمشنر کے حکم پر سائبر سیل نے آئی ٹی ایکٹ کے تحت ایف آئی آر درج کرکے تفتیش شروع کردی ہے۔

  • Share this:
 سشانت سنگھ راجپوت خودکشی معاملہ میں ممبئی پولیس کو بدنام کرنے کیلئے بیرون ملک میں فرضی اکاؤنٹ بنائے گئے : پولیس کمشنر
 سنشانت سنگھ راجپوت خودکشی معاملہ میں ممبئی پولس کو بدنام کرنے کیلئے بیرون ملک میں فرضی اکاؤنٹ بنائے گئے

ممبئی :  فلم اداکار سشانت سنگھ راجپوت خودکشی کے معاملہ میں اب سائبر سیل نے یہ دعوی کیا ہے کہ ممبئی پولس کو بدنام کرنے کی سازش رچی گئی تھی اور باقاعدہ طور پر بیرون ملک فرضی اکاؤنٹ تیار کرکے پولس کو بدنام کرنے کی کوشش کی گئی ۔ اس معاملہ میں پولس نے دو کیس بھی درج کئے ہیں ۔ ممبئی پولیس نے بتایا کہ سوشل میڈیا اکاؤنٹ کو فرضی طریقے سے آپریٹ کیا گیا اور اس میں بیرون ممالک کے کئی سرور ہیں ۔ اس سال 14 جون کو اداکار سشانت سنگھ راجپوت نے خودکشی کرل تھی ۔ سشانت سنگھ کی موت کے بعد سوشل میڈیا پر ان کے قتل کی باتیں ہو رہی تھیں اور کئی دنوں تک وہ سوشل میڈیا پر ہیش ٹیگ کے ٹاپ ٹرینڈ میں رہے ۔ اس معاملہ میں ممبئی پولیس کی سائبر ٹیم نے ایک بڑا انکشاف کیا ہے ۔ پولیس کا دعویٰ ہے کہ ممبئی پولیس کی تحقیقات اور مہاراشٹر حکومت کو بدنام کرنے کے لئے 80000 سے زیادہ جعلی سوشل میڈیا اکاؤنٹ بنائے گئے تھے ۔ اس معاملہ میں ممبئی پولیس کمشنر کے حکم پر سائبر سیل نے آئی ٹی ایکٹ کے تحت ایف آئی آر درج کرکے تفتیش شروع کردی ہے۔


پولیس کمشنر پرمبیر سنگھ نے بتایا کہ ممبئی پولیس کو بدنام کرنے کے لئے اس مہم کے لئے ایف آئی آر درج کی گئی ہے ۔ اب سائبر سیل یونٹ نے تفصیلی تفتیش شروع کردی ہے۔ کمشنر نے کہا کہ زیادہ تر جعلی اکاؤنٹس کا بیرون ملک سے پراکسی سرور ہوتا ہے ۔ سائبر سیل کی رپورٹ میں انکشاف ہوا ہے کہ ممبئی پولیس کے خلاف پوسٹیں دنیا کے مختلف ممالک جیسے اٹلی ، جاپان ، پولینڈ ، سلووینیا ، انڈونیشیا ، ترکی ، تھائی لینڈ ، رومانیہ سے کی گئیں ۔


کمشنر نے کہا کہ جعلی کھاتوں کی تعداد ہزاروں میں ہوسکتی ہے ۔ فی الحال ہم اس بارے میں ڈیٹا اکٹھا کر رہے ہیں ۔ اس جعلی اکاؤنٹ کے ذریعہ مہاراشٹر اور ممبئی پولیس کے بارے میں پچھلے کچھ مہینوں سے افواہیں پھیلائی جارہی ہیں ۔ ہمیں اس کے بارے میں بتایا گیا ، جس کے بعد سائبر پولیس کو اس کی حقیقت جانچنے کا حکم دیا گیا ۔


سائبر پولیس کی چھان بین میں پتا چلا ہے کہ پولیس کو بدنام کرنے کے لئے ہزاروں جعلی اکاؤنٹس کی سازش رچی گئی تھی ۔ پولیس کمشنر کے لئے غیر مہذب تبصرے کیے گئے اور ٹرول کیے گئے ۔ اس کے لیے سوشل میڈیا پلیٹ فارم استعمال کیے گئے ۔ سشانت سنگھ راجپوت کو ممبئی پولیس کے ساتھ ہر غیر شائستہ پوسٹ اور تبصروں میں ٹیگ کیا گیا ہے ۔

ممبئی سائبر سیل کے ڈی سی پی نے بتایا کہ ممبئی پولیس کمشنر کو ٹرول کرتے ہوئے سوشل میڈیا میں ہزاروں سوشل میڈیا اکاؤنٹ موجود ہیں۔ اس معاملے میں آئی ٹی ایکٹ کی دفعہ 67 کے تحت مقدمہ درج کیا گیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ اس سے قبل 2 ستمبر کو ایک ملزم کے خلاف مقدمہ درج کیا گیا تھا ۔ انہوں نے پولیس کمشنر کی جانب سے ٹویٹر پر ایک مورف تصویر بنائی ۔

سائبر پولیس نے عہدیداروں سے کہا ہے کہ وہ سوشل میڈیا کے تمام پلیٹ فارم پر نظر رکھیں اور ممبئی پولیس کی تفصیلات یا قابل اعتراض پوسٹس والے اکاؤنٹس کے حوالے کریں ۔ خاص طور پر ان اکاؤنٹس پر ایک خاص نگاہ ہے جو تین ماہ قبل رونما ہوئے سشانت سنگھ راجپوت کی موت کے بعد بنائے گئے تھے ۔ پولیس نے تمام مشکوک اکاؤنٹس کو بلاک کردیا ہے۔

پولیس کو بدنام کرنے کے لئے ٹویٹر، انسٹاگرام اور فیس بک سمیت دیگر سوشل میڈیا پلیٹ فارمس پر # جسٹس فور ایس ایس آر اور # سشانت کونسیپیریسی ایکسپوزڈ # جسٹس فور سشانت # سشانت سنگھ راجپوت اور # ایس ایس آر کو استعمال کرنے کے لئے تفتیش ملی ۔ پولیس نے کہا کہ آئی ٹی ایکٹ جس کے تحت جعلی اکاونٹ رکھنے والوں کے خلاف مقدمات درج کیے گئے ہیں ، اس میں 5 سال قید اور 5 سے 10 لاکھ روپے جرمانے کی سہولت ہے۔
Published by: Imtiyaz Saqibe
First published: Oct 06, 2020 10:30 PM IST