உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    Ahmedabad Serial Bomb Blast Case: گجرات اسپیشل کورٹ کا بڑا فیصلہ ، 49 افراد قصوروار قرار، 28 کو کیا بری

    Ahmedabad Serial Bomb Blast Case : احمد آباد سلسلہ وار بم دھماکہ کیس میں گجرات کی خصوصی عدالت کا فیصلہ آگیا ہے۔ سیریل بلاسٹ کیس میں عدالت نے 49 افراد کو قصوروار قرار دیا ہے۔ ساتھ ہی 77 میں سے 28 ملزمین کو بے قصور قرار دیتے ہوئے بری کر دیا ہے ۔

    Ahmedabad Serial Bomb Blast Case : احمد آباد سلسلہ وار بم دھماکہ کیس میں گجرات کی خصوصی عدالت کا فیصلہ آگیا ہے۔ سیریل بلاسٹ کیس میں عدالت نے 49 افراد کو قصوروار قرار دیا ہے۔ ساتھ ہی 77 میں سے 28 ملزمین کو بے قصور قرار دیتے ہوئے بری کر دیا ہے ۔

    Ahmedabad Serial Bomb Blast Case : احمد آباد سلسلہ وار بم دھماکہ کیس میں گجرات کی خصوصی عدالت کا فیصلہ آگیا ہے۔ سیریل بلاسٹ کیس میں عدالت نے 49 افراد کو قصوروار قرار دیا ہے۔ ساتھ ہی 77 میں سے 28 ملزمین کو بے قصور قرار دیتے ہوئے بری کر دیا ہے ۔

    • Share this:
      احمد اباد : احمد آباد سلسلہ وار بم دھماکہ کیس (Ahmedabad Serial Bomb Blast Case) میں گجرات کی خصوصی عدالت کا فیصلہ آگیا ہے۔ سیریل بلاسٹ کیس میں عدالت نے 49 افراد کو قصوروار قرار دیا ہے۔ ساتھ ہی 77 میں سے 28 ملزمین کو بے قصور قرار دیتے ہوئے بری کر دیا ہے ۔ خصوصی عدالت کے جج امبالال پٹیل نے احمد آباد میں 2008 کے سلسلہ وار بم دھماکوں کا فیصلہ سنایا ۔ احمد آباد میں 20 مقامات پر ہوئے 21 دھماکوں میں ملزمان کے خلاف معاملہ درج کیا گیا تھا ، جس میں 28 ملزمان 7 ریاستوں کی جیلوں میں بند ہیں ۔

      قابل ذکر ہے کہ احمد آباد سلسلہ وار بم دھماکوں کے کیس میں 9000 صفحات کی چارچیٹ پیش کی گئی تھی ، جس میں 6000 دستاویزی ثبوت رکھے گئے تھے ۔ گجرات میں نو جج بدل چکے ہیں ۔ وہیں 1117 گواہوں کے بیانات لئے گئے ہیں ۔ احمد آباد میں سال 2008 میں ہوئے سلسلہ وار بم دھماکوں کے معاملہ میں اسیپشل کورٹ نے اپنا فیصلہ سناتے ہوئے 77 میں سے 49 لوگواں کو قصوروار قراردیا جبکہ 28 افراد کو بری کردیا گیا ۔

      اس معاملہ میں احمد آباد میں 19 اور کلول میں ایک معاملہ درج کیا گیا تھا ۔ پراسیکیوشن فریق کی جانب سے عدالت میں کہا گیا تھا کہ ملزمین کے خلاف بم بنانے کے وافر ثبوت ہیں ، جن گاڑیوں میں بم لگائے گئے تھے ، وہ اس بات کے ثبوت ہیں کہ گاڑیاں ملزمین کے ذریعہ لی گئی تھیں۔ ملزمین کے خلاف مجرمانہ سازش ، غداری اور سرکار کے خلاف جنگ چھیڑنے کے بھی ثبوت ہیں ۔

      بتادیں کہ 26 جولائی 2008 کو احمد آباد میں 20 الگ الگ مقامات پر دھماکے ہوئے تھے ، جس میں 56 افراد کی موت ہوگئی تھی اور 246 لوگ سنگین طور پر زخمی ہوئے تھے ۔
      Published by:Imtiyaz Saqibe
      First published: