ہوم » نیوز » مغربی ہندوستان

انجن کے بغیر ہی 10 کلو میٹر تک دوڑی ٹرین ، اسٹاف نے پٹریوں پر پتھر رکھ کر روکا

اوڈیشہ کے ٹٹلا گڑھ ریلوے اسٹیشن پر ٹرین کے ڈبے انجن سے الگ ہوگئے، جس کی وجہ سے انجن کے بغیر ہی ٹرین 10 کلو میٹر تک دوڑتی رہی ۔

  • Share this:
  • author image
    NEWS18-Urdu
انجن کے بغیر ہی 10 کلو میٹر تک دوڑی ٹرین ، اسٹاف نے پٹریوں پر پتھر رکھ کر روکا
سبھی مسافر محفوظ ہیں۔ فائل فوٹو

احمد آباد : احمد آباد - پوری سپر فاسٹ ٹرین ہفتہ کو بڑے حادثہ کا شکار ہونے سے بچ گئی ۔ اوڈیشہ کے ٹٹلا گڑھ ریلوے اسٹیشن پر ٹرین کے ڈبے انجن سے الگ ہوگئے، جس کی وجہ سے انجن کے بغیر ہی ٹرین 10 کلو میٹر تک دوڑتی رہی ۔ ٹرین کو قابو میں کرنے کیلئے ٹریک پر پتھر رکھے گئے اور ملازمین نے اسے روکا۔

بتایا جارہا ہے کہ ٹرین میں اسکڈ بریک نہیں لگائے گئے تھے ، جس کی وجہ سے انجن ڈبوں سے الگ ہوگیا ۔ ٹٹلا گڑھ ریلوے اسٹیشن کے بعد کافی طویل ڈھلان ہے ،جس کی وجہ سے انجن کے بغیر ہی ٹرین آگے چلتے چلی گئی ۔ اچھی بات یہ رہی کہ اس واقعہ میں ٹرین میں سوار کسی بھی مسافر کو نقصان نہیں پہنچا اور سب محفوظ ہیں۔ اس سلسلہ میں ریلوے نے دو ملازمین کو معطل کردیا ہے۔

احمد آباد - پوری سپرفاسٹ ٹرین کیسنگا جارہی تھی۔ ریلوے اہلکاروں کے مطابق جب انجن کو کوچ سے الگ کیا جاتا ہے تو اسے دوسری جانب سے دوبارہ لگایا جاتا ہے ۔ اس دوران ٹرین کے ڈبوں کو روکے رکھنے کیلئے اس کے پہیوں پر اسکڈ بریک لگائے جاتے ہیں ۔ بتایا جارہا ہے کہ اس ٹرین میں اسکڈ بریک نہیں لگایا گیا تھا ، جس کی وجہ سے ٹرین آگے نکل گئی۔

First published: Apr 08, 2018 02:00 PM IST