உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    مرکزی وزیر داخلہ امت شاہ نے اے اے پی پر سادھا نشانہ، کہا: 'خواب بیچنے' والے گجرات میں نہیں جیتیں گے

    مرکزی وزیر داخلہ امت شاہ نے اے اے پی پر سادھا نشانہ، کہا: 'خواب بیچنے' والے گجرات میں نہیں جیتیں گے

    مرکزی وزیر داخلہ امت شاہ نے اے اے پی پر سادھا نشانہ، کہا: 'خواب بیچنے' والے گجرات میں نہیں جیتیں گے

    Amit Shah News: امت شاہ نے بھوپیندر پٹیل کے وزیر اعلی عہدہ پر ایک سال مکمل ہونے کے موقع پر گاندھی نگر میں منعقدہ ایک پروگرام کو خطاب کرتے ہوئے کہا کہ خواب بیچنے والوں کو گجرات میں کبھی انتخابی کامیابی نہیں ملے گی ۔

    • News18 Urdu
    • Last Updated :
    • Gujarat | Ahmadabad | Surat
    • Share this:
      احمد آباد : مرکزی وزیر داخلہ امت شاہ نے منگل کو اروند کیجریوال کی قیادت والی عام آدمی پارٹی پر بالواسطہ طور پر نشانہ سادھتے ہوئے کہا کہ جو لوگ خواب بیچتے ہیں وہ گجرات میں کبھی نہیں جیتیں گے ۔ گجرات میں اس سال دسمبر میں اسمبلی انتخابات ہونے والے ہیں ۔ ڈیجیٹل طریقہ سے ایک پروگرام کو خطاب کرتے ہوئے امت شاہ نے وزیر اعلی بھوپیندر پٹیل کی قیادت کی سراہنا کرتے ہوئے کہا کہ برسراقتدار بی جے پی دو تہائی اکثریت کے ساتھ گجرات میں ایک مرتبہ پھر سرکار بنائے گی ۔

       

      یہ بھی پڑھئے: مرکزی حکومت جموں و کشمیر کے قبائلیوں کو با اختیار بنانے کیلئے کر رہی ہیں اقدامات


      امت شاہ نے  بھوپیندر پٹیل کے وزیر اعلی عہدہ پر ایک سال مکمل ہونے کے موقع پر گاندھی نگر میں منعقدہ ایک پروگرام کو خطاب کرتے ہوئے کہا کہ خواب بیچنے والوں کو گجرات میں کبھی انتخابی کامیابی نہیں ملے گی ۔

       

      یہ بھی پڑھئے: حجاب پر پابندی معاملہ کی سپریم کورٹ میں سماعت، سلمان خورشید نے دی یہ دلیلیں


      انہوں نے کہا کہ میں گجرات کے لوگوں کو جانتا ہوں ، خواب بیچنے والوں کو گجرات میں کبھی کامیابی نہیں مل سکتی، کیونکہ عوام انہیں کی حمایت کرتے ہیں جو کام کرنے میں یقین رکھتے ہیں ، اس لئے لوگ بی جے پی کے ساتھ ہیں ۔ بی جے پی شاندار جیت حاصل کرے گی ۔

      امت شاہ نے کہا کہ میں بھوپیندر بھائی سے کہنا چاہتا ہوں کہ گجرات کے عوام بی جے پی کے ساتھ ہیں ۔ میں بہت واضح طور پر دیکھ سکتا ہوں کہ وزیر اعظم نریندر مودی اور آپ کی قیادت میں بی جے پی اگلے الیکشن میں ایک مرتبہ پھر دو تہائی اکثریت کے ساتھ سرکار بنائے گی ۔
      Published by:Imtiyaz Saqibe
      First published: