உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    القاعدہ، آئی ایس آئی کے حملے کا خدشہ، پولیس نے بڑھائی چوکسی، مشتبہ شخص یا چیز ملنے پر پولیس کو کریں اطلاع: پولیس

    ذرائع نے بتایا ہے کہ حساس مقامات پر چوکسی اور سکیورٹی بڑھا دی گئی ہے۔ اس کے ساتھ ہی ریاست بھر میں پولیس کو چوکس رہنے کے احکامات دیے گئے ہیں۔

    ذرائع نے بتایا ہے کہ حساس مقامات پر چوکسی اور سکیورٹی بڑھا دی گئی ہے۔ اس کے ساتھ ہی ریاست بھر میں پولیس کو چوکس رہنے کے احکامات دیے گئے ہیں۔

    لوگوں سے اپیل کی گئی ہے کہ اگر کوئی مشتبہ شخص یا چیز مل جائے تو فوری طور پر پولیس کو مطلع کریں۔ پولیس نے رات کے گشت کو مزید چوکس کر دیا ہے جبکہ پولیس نے ریلوے اسٹیشن ، بس اسٹینڈ اور بازاروں پر بھی کڑی نظر رکھنا شروع کر دی ہے۔

    • Share this:
      گوہاٹی: آسام پولیس نے ریاست میں مسلمانوں پر مبینہ ظلم و ستم پر پاکستان  (pakistan) کی خفیہ ایجنسی انٹر سروسز انٹیلی جنس (آئی ایس آئی (isi) اور دہشت گرد تنظیم القاعدہ  (Al Qaeda terrorist organization)  کی جانب سے دہشت گردانہ حملہ کیا جانے کے اندیشہ کے مد نظر الرٹ جاری کیا ہے۔ سنیچر کو اسسٹنٹ انسپکٹر جنرل آف پولیس (لاء اینڈ آرڈر) کی طرف سے جاری کردہ سرکلر کے مطابق ریاستی پولیس کی اسپیشل برانچ سے موصولہ رپورٹ کی بنیاد پر الرٹ جاری کیا گیا ہے۔ اس کے تحت ریاست میں خصوصی چوکسی اختیار کرنے اور مشکوک سرگرمیوں پر فوری کارروائی کرنے کو کہا گیا ہے۔

      سرکولر میں کہا گیا ہے کہ آئی ایس آئی "راشٹریہ سویم سیوک سنگھ (آر ایس ایس) اور آسام و ملک کے دیگر حصوں میں فوجی علاقوں کو نشانہ بنانے کا منصوبہ بنا رہا ہے۔"

      اس میں کہا گیا ہے کہ 'عالمی دہشت گرد تنظیم کے ذریعے اجتماعی اجلاس، پبلک ٹرانسپورٹ اور مذہبی مقامات وغیرہ پر بم/آئی ای ڈی کا استعمال کرکے حملہ کئے جانے  کا بھی خطرہ ہے۔' سرکولر اور اطلاع کی بیناد پر کہا گیا ہے کہ القاعدہ نے آسام اور کشمیر میں جہاد کا اعلان کیا ہے۔

      اس میں کہا گیا ہے کہ  (او آئی سی) کے جنرل سکریٹریٹ نے آسام کے ضلع درنگ کے دھولپور میں تجاوزات کو ہٹانے کی مہم کے حوالے سے ایک بیان جاری کیا ہے۔ دھولپور واقعے میں چھ افراد ہلاک ہوئے تھے  جبکہ 20 سے زائد افراد زخمی بھی ہوئے تھے۔ معلومات کی بنیاد پر بتایا گیا کہ دہشت گرد تنظیم القاعدہ نے آسام اور کشمیر میں جہاد کے بارے میں اعلان کیا ہے ، اس خدشے کے پیش نظر مشتبہ افراد ، سرگرمیوں پر نظر رکھی جا رہی ہے۔

      ذرائع نے بتایا ہے کہ حساس مقامات پر چوکسی اور سکیورٹی بڑھا دی گئی ہے۔ اس کے ساتھ ہی ریاست بھر میں پولیس کو چوکس رہنے کے احکامات دیے گئے ہیں۔ لوگوں سے اپیل کی گئی ہے کہ اگر کوئی مشتبہ شخص یا چیز مل جائے تو فوری طور پر پولیس کو مطلع کریں۔ پولیس نے رات کے گشت کو مزید چوکس کر دیا ہے جبکہ پولیس نے ریلوے اسٹیشن ، بس اسٹینڈ اور بازاروں پر بھی کڑی نظر رکھنا شروع کر دی ہے۔
      Published by:Sana Naeem
      First published: