ہوم » نیوز » مغربی ہندوستان

مہاراشٹر میں بھی پہنچا برڈ فلو، پربھنی کے پولٹری فارم میں 800 مرغیوں کی موت سے مچا ہنگامہ

مہاراشٹرا (Maharashtra) کے ضلع پربھنی کے مرومبہ گاؤں میں واقع پولٹری فارم میں 800 (Bird Flu) کی موت ہلاک ہو گئی ہے۔ پربھنی کے ضلعی مجسٹریٹ دیپک ملگیکر نے پہلے اس واقعے کے بعد جانکاری دی تھی کہ مرغیوں کی موت کی اصل وجہ معلوم کرنے کے لئے نمونے جانچ کے لئے بھیجے گئے ہیں۔

  • Share this:
مہاراشٹر میں بھی پہنچا برڈ فلو، پربھنی کے پولٹری فارم میں 800 مرغیوں کی موت سے مچا ہنگامہ
مہاراشٹرا (Maharashtra) کے ضلع پربھنی کے مرومبہ گاؤں میں واقع پولٹری فارم میں 800 (Bird Flu) کی موت ہلاک ہو گئی ہے۔ پربھنی کے ضلعی مجسٹریٹ دیپک ملگیکر نے پہلے اس واقعے کے بعد جانکاری دی تھی کہ مرغیوں کی موت کی اصل وجہ معلوم کرنے کے لئے نمونے جانچ کے لئے بھیجے گئے ہیں۔

اورنگ آباد: مہاراشٹرا (Maharashtra) کے ضلع پربھنی کے مرومبہ گاؤں میں واقع پولٹری فارم میں 800 (Bird Flu) کی موت  ہلاک ہو گئی ہے۔ پربھنی کے ضلعی مجسٹریٹ دیپک ملگیکر نے پہلے اس واقعے کے بعد جانکاری دی تھی کہ مرغیوں کی موت کی اصل وجہ معلوم کرنے کے لئے نمونے جانچ کے لئے بھیجے گئے ہیں۔ اب اس جانچ کی رپورٹ آچکی ہے اور اس کی تصدیق ہوگئی ہے کہ یہ اموات برڈ فلو کی وجہ سے ہوئی ہیں۔


دو دنوں میں 800 مرغیوں کی موت مراٹواڑہ کے علاقہ کے مرومبہ گاؤں میں ہوئی ہےجس پولٹری فام میں مرغیوں کی موت ہوئی ہے است خود  (ایس ایچ جی) پولٹری فارم چلاتا ہے۔ ڈی ایم کے مطابق اس پولٹری فارم میں آٹھ ہزار کے قریب مرغیاں ہیں۔ دو دن میں 800 مرغیاں فوت ہوگئیں۔ اب اس گاؤں کے 10 کلومیٹر کے دائرے میں آنے والے علاقوں میں مرغی نہیں بھیجی جائے گی۔


مہاراشٹر میں برڈ فلو کا یہ پہلا کیس ہے۔ ایسی صورتحال میں اب آٹھ ریاستوں میں برڈ فلو کے پھیلنے کی تصدیق ہوگئی ہے۔ کیرالہ، راجستھان ، مہاراشٹر ، مدھیہ پردیش ، ہماچل پردیش ، ہریانہ ، گجرات اور اتر پردیش میں برڈ فلو کے پھیلنے کی تصدیق ہوگئی ہے۔

اس درمیان چڑیا گھر کے مختلف انتظامیہ کو ہدایت دی گئی ہے کہ وہ روزانہ کی رپورٹ سینٹرل چڑیا گھر اتھارٹی (سی زیڈ اے) کو بھیجیں اور ایسا تب تک جاری رکھیں جب تک کہ ان کے علاقے کو بیماری سے  آزاد قرار نہ دیا جائے۔




وزارت ماحولیات کے ماتحت سی زیڈ اے نے ایک (official memorandum) جاری کرکے  کہا کہ  ایویئن انفلوئنزا پرندوں میں متعدد بیماری کی روک تھام اور کنٹرول قانون  2009 کے تحت طے شدہ شدہ بیماری ہے اور اسے پھیلنے سے روکنے کیلئے اس طرح کی بیماری کی جانکاری دینا لازمی ہے۔
Published by: Sana Naeem
First published: Jan 11, 2021 09:28 AM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading