ہوم » نیوز » مغربی ہندوستان

ہائی کورٹ نے کی سینسر بورڈ کی سرزنش ، پوچھا : اڑتا پنجاب سے کیا پریشانی ہے؟

ممبئی : فلم اڑتا پنجاب کا تنازع اب کورٹ میں بھی پہنچ گیا ہے۔ بمبئی ہائی کورٹ نے آج اس معاملے پر سماعت کی اور سینسر بورڈ کی جم کر سرزنش کی ۔

  • Pradesh18
  • Last Updated: Jun 09, 2016 06:20 PM IST
  • Share this:
  • author image
    NEWS18-Urdu
ہائی کورٹ نے کی سینسر بورڈ کی سرزنش ، پوچھا : اڑتا پنجاب سے کیا پریشانی ہے؟
ممبئی : فلم اڑتا پنجاب کا تنازع اب کورٹ میں بھی پہنچ گیا ہے۔ بمبئی ہائی کورٹ نے آج اس معاملے پر سماعت کی اور سینسر بورڈ کی جم کر سرزنش کی ۔

ممبئی : فلم اڑتا پنجاب کا تنازع اب کورٹ میں بھی پہنچ گیا ہے۔ بمبئی ہائی کورٹ نے آج اس معاملے پر سماعت کی اور سینسر بورڈ کی جم کر سرزنش کی ۔ ہائی کورٹ کل بھی اس فلم کو لے کر سماعت جاری رکھے گا۔

کورٹ نے کہا کہ جب فلموں کے نام 'ہمارے ایم ایل اے رام اوتار ، 'گو گوا گون ، 'بامبے ٹو گوا جیسے ہو سکتے ہیں ، تو اڑتا پنجاب میں کیا دقت ہے۔ فلم کے نام اور اس کے اندر استعمال ہونے والے الفاظ سے بھلا ملک کی یکجہتی اور خود مختاری پر کس طرح سوالات كھڑےہو سکتے ہیں۔

ادھر پنجاب کانگریس کے صدر کیپٹن امرندر سنگھ نے اڑتا پنجاب ٹیم اور انوراگ کشیپ کو خط لکھ کر فلم کی غیر سینسر شدہ کاپی مانگی ہے ، تاکہ وہ اسے مجيٹھا اسمبلی حلقہ میں دکھا سکیں ، جو پنجاب کے کابینہ وزیر وکرم سنگھ مجیٹھیا کا اسمبلی حلقہ ہے۔ خیالر ہے کہ مجیٹھیا پر منشیات اسمگلروں سے تعلق رکھنے کے الزام لگتے رہے ہیں۔

First published: Jun 09, 2016 06:20 PM IST