ہوم » نیوز » No Category

بلیٹ رانی : پالکی نہیں جب موٹر سائیکل پر سوار ہوکر منڈپ پہنچی دلہن

احمد آباد : شادی میں یوں تو دولہا کی انٹری دھماکہ خیزہوتی ہے ، لیکن ایک شادی میں دلہن نے منڈپ میں دھماکہ دار طریقے سے انٹری لی ۔ یوں تو دلہن اکثر پالکی میں آتی ہے ، مگر احمد آباد کی یہ دلہن بلیٹ پر سوار ہوکر آئی۔

  • News18
  • Last Updated: Jan 24, 2016 12:48 PM IST
  • Share this:
  • author image
    NEWS18-Urdu
بلیٹ رانی : پالکی نہیں جب موٹر سائیکل پر سوار ہوکر منڈپ پہنچی دلہن
احمد آباد : شادی میں یوں تو دولہا کی انٹری دھماکہ خیزہوتی ہے ، لیکن ایک شادی میں دلہن نے منڈپ میں دھماکہ دار طریقے سے انٹری لی ۔ یوں تو دلہن اکثر پالکی میں آتی ہے ، مگر احمد آباد کی یہ دلہن بلیٹ پر سوار ہوکر آئی۔

احمد آباد : شادی میں یوں تو دولہا کی انٹری دھماکہ خیزہوتی ہے ، لیکن ایک شادی میں دلہن نے منڈپ میں دھماکہ دار طریقے سے انٹری لی ۔ یوں تو دلہن اکثر پالکی میں آتی ہے ، مگر احمد آباد کی یہ دلہن بلیٹ پر سوار ہوکر آئی۔


احمد آباد کی عائشہ اپادھیائے بلیٹ کی شوقین ہے اور جب اس کی شادی ہوئی ، تو اس نے پنڈال میں آنے کے لئے پالکی نہیں بلکہ بلیٹ کا انتخاب کیا۔ عائشہ دیگر دلہنوں سے مختلف اپنی شادی میں انٹری لینا چاہتی تھی اور یہی وجہ ہے کہ اس نے بلیٹ سے منڈپ تک جانے کا فیصلہ کیا۔


اس دوران عائشہ دبنگ اسٹائل میں شادی کے جوڑے کے ساتھ چشمہ پہن کر بلیٹ سے آئی ۔ عائشہ کے بھائی ادت نے رکشا بندھن پر بلیٹ 350 گفٹ کی تھی، اسی سے عائشہ نے اپنی شادی میں انٹری لی۔ طرفہ تماشہ یہ کہ عائشہ کے ہونے والے دولہے لوکک ویاس کو موٹر سائیکل چلانی ہی نہیں آتی ہے۔ وہ کینیڈا میں ملازمت کرتا ہے۔


عائشہ اپادھیائے کمپیوٹر ایپلی کیشنز کی پروفیسر ہے۔ عائشہ جب اسکول میں 9 ویں کلاس میں تھی ، تب اس نے پہلی مرتبہ اپنے والد کی 100 سی سی موٹر سائیکل چلائی تھی اور اس وقت سے ہی اس کو موٹر سائیکل کا شوق پیدا ہوگیا۔ عائشہ گزشتہ 13 سال سے موٹر سائیکل چلا رہی ہے۔

First published: Jan 24, 2016 12:48 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading