உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    مالیگاوں : عائشہ نگر قبرستان میں چھوٹے بچے کی قبر پر راکھ اور جلی ہوئی ہڈیاں ملنے سے شہر میں سنسنی

    مہاراشٹر کے مالیگاوں شہر کے عائشہ نگر قبرستان میں ایک چھوٹے بچے کی قبر پر راکھ اور کوئلے کے ساتھ جلی ہوئی ہڈیاں ملنے سے پورے شہر میں سنسنی پھیل گئی

    مہاراشٹر کے مالیگاوں شہر کے عائشہ نگر قبرستان میں ایک چھوٹے بچے کی قبر پر راکھ اور کوئلے کے ساتھ جلی ہوئی ہڈیاں ملنے سے پورے شہر میں سنسنی پھیل گئی

    مہاراشٹر کے مالیگاوں شہر کے عائشہ نگر قبرستان میں ایک چھوٹے بچے کی قبر پر راکھ اور کوئلے کے ساتھ جلی ہوئی ہڈیاں ملنے سے پورے شہر میں سنسنی پھیل گئی

    • Share this:
      مالیگاوں : مہاراشٹر کے مالیگاوں شہر کے عائشہ نگر قبرستان میں ایک چھوٹے بچے کی قبر پر راکھ اور کوئلے کے ساتھ جلی ہوئی ہڈیاں ملنے سے پورے شہر میں سنسنی پھیل گئی ۔یہ ہڈیاں پہلی نظر میں چھوٹے بچے کی دکھائی دے رہی ہیں ۔ پولیس نے ہڈیوں کو جمع کر کے فورینسک جانچ کیلئے ممبئی فورینسک لیب بھیج دیا ہے ۔
      قبرستان کے ٹرسٹیوں کی شکایت پر پولیس نے معاملہ درج کر کے جانچ بھی شروع کر دی ہے ۔ مالیگاوں شہر کی تاریخ کو دیکھتے ہوئے قبرستانوں کی حفاظت کو لے کر ایک بار معاملہ گرماتا ہوا نظر آرہا ہے۔
      خیال رہے کہ 2006 میں بڑا قبرستان بم دھماکہ کے بعد شہر کے سبھی قبرستانوں میں سی سی ٹی وی کیمرے لگانا ضرور ی قرار دیا گیا تھا۔ تاہم 12 سال کا عرصہ گزر جانے کے بعد بھی کسی بھی قبرستان میں سی سی ٹی وی کیمرے لگائے نہیں گئے ہیں۔قبرستان کے ٹرسٹی پولیس سے قبرستانوں کی حفاظت کا مطالبہ کررہے ہیں ۔
      First published: