ہوم » نیوز » مغربی ہندوستان

معمولی بات پر شمالی گجرات کے گاؤں میں فرقہ وارانہ تشدد ، ایک کی موت، 10 زخمی، 40 سے زیادہ گھرنذر آتش

گجرات کے شمالی ضلع پاٹن کے ایک گاؤں میں دو طلبا کے درمیان معمولی بات پرکہا سنی کے بعد جھگڑا اتنا بڑھ گیا کہ اس میں ایک شخص کی موت اور کم از کم 10 دیگر زخمی ہو گئے

  • UNI
  • Last Updated: Mar 25, 2017 09:55 PM IST
  • Share this:
  • author image
    NEWS18-Urdu
معمولی بات پر شمالی گجرات کے گاؤں میں فرقہ وارانہ تشدد ، ایک کی موت، 10 زخمی، 40 سے زیادہ گھرنذر آتش
علامتی تصویر

احمد آباد / پاٹن: گجرات کے شمالی ضلع پاٹن کے ایک گاؤں میں دو طلبا کے درمیان معمولی بات پرکہا سنی کے بعد جھگڑا اتنا بڑھ گیا کہ اس میں ایک شخص کی موت اور کم از کم 10 دیگر زخمی ہو گئے جبکہ 40 سے زیادہ گھروں میں آگ لگا دی گئی۔

پولیس نے بتایا کہ چاسما تھانہ علاقے کے وڈاولی گاؤں کے 12 ویں کلاس کے دو طلباکے درمیان معمولی کہا سنی ہو گئی۔ بعد میں اس میں بڑے لوگوں کے شامل ہونے سے بات بگڑ گئی اور اس نے فرقہ کی بنیادپر فساد کی شکل اختیار کرلی ۔ اس کے بعد مشتعل بھیڑ نے 40 گھروں میں آگ لگا دی۔

اس تصادم کے دوران ابراہیم لا ل خان ویلم (50) کی موت ہو گئی اور 10 دیگر زخمی ہو گئے۔ بعد میں پولیس نے بڑی تعداد میں موقع پر پہنچ کر صورتحال کو کنٹرول کیا۔ بتایا جاتا ہے کہ پولیس کو مشتعل بھیڑ کو کنٹرول کرنے کے لئے ہوا میں گولی بھی چلانی پڑی۔ فائر بریگیڈ کا عملہ گھروں میں لگی آگ کو بجھانے میں مصروف تھا۔

First published: Mar 25, 2017 09:55 PM IST