ہوم » نیوز » مغربی ہندوستان

راجستھان: کانگریس میں پہلی فہرست کے ساتھ ہی ہنگامہ آرائی، کئی مقامات پراحتجاج اوراستعفیٰ

ٹکٹوں کی تقسیم کے بعد بی جے پی میں ہوئی بغاوت پرطنزکرنے والی کانگریس میں بھی پہلی فہرست کے بعد سورج غروب ہوتے ہی بغاوت کی آواز تیزی سے سنائی دینے لگی ہے۔ کوٹہ میں پارٹی دفترمیں توڑپھوڑبھی کی گئی ہے۔

  • Share this:
راجستھان: کانگریس میں پہلی فہرست کے ساتھ ہی ہنگامہ آرائی، کئی مقامات پراحتجاج اوراستعفیٰ
اشوک گہلوت اورسچن پائلٹ: فائل فوٹو

ٹکٹوں کی تقسیم کے بعد بی جے پی میں ہوئی بغاوت پرطنزکرنے والی کانگریس میں بھی پہلی فہرست کے بعد بغاوت کی آواز تیزی سے سنائی دینے لگی ہے۔ راجستھان اسمبلی انتخابات کے لئے کانگریس کی طرف سے جاری کی گئی 152 امیدواروں کی فہرست کے بعد تقریباً ڈیڑھ درجن سے زیادہ سیٹوں پرامیدواروں کی جم کرمخالفت کی جارہی ہے۔


کوٹہ میں پارٹی دفترپرتوڑپھوڑبھی کی گئی ہے۔ ٹکٹوں کی تقسیم سے ناراض عہدیداروں کے ذریعہ استعفیٰ دیئے جانے کا سلسلہ بھی شروع ہوگیا ہے۔ بغاوت کے سُردارالحکومت جے پور سے لے کردیگراضلاع میں بھی تیزی سے اٹھ رہے ہیں۔


کانگریس کے بڑے جلسے میں پارٹی صدرراہل گاندھی نے کہا تھا کہ"پیراشوٹ امیدواروں کی رسی میں خود کاٹوں گا"۔  اس بیان کے باوجود پیرا شوٹ امیدواروں کو ٹکٹ دیئے جانے کی زبردست مخالفت ہورہی ہے۔


باڑمیرمیں ایسے ہی ایک امیدوارکو کارکنان کی ناراضگی کا سامنا کرنا پڑا اوراسے میٹنگ سے اٹھ کرجانا پڑا۔ وہیں بیکانیرشہرمیں مشرق اورمغرب دونوں سیٹوں پرامیدواروں کی زبردست مخالفت ہورہی ہے۔ کئی مقامات پردعویداراوں نے آزاد الیکشن لڑنے کا بھی اعلان کردیا ہے۔ وہیں کہیں مقامات پرٹکٹ سے محروم دعویداراپنے حامیوں کے ساتھ حکمت عملی بنانے میں مصروف ہیں۔

کوٹہ جنوب سے راکھی گوتم کوامیدواربنائے جانے کے بعد کارکنان نے کانگریس دفترمیں گھس کرجم کرہنگامہ آرائی کی اورتوڑپھوڑ بھی کیا۔ بیکا نیرمیں بی ڈی کلا کا ٹکٹ کٹنے سے ناراض کارکنان نے رات کو ہی ڈاگا چوک پراپوزیشن لیڈررامیشورڈوڈی کے خلاف جم کرنعرے بازی کی اوروہاں پڑے پرانے فرنیچرکوآگ لگادی۔ جمعہ کو شہرمیں ریلی نکالی گئی اورسانکھلا ریلوے پھاٹک کوجام کردیا۔

اجمیرکی مسودہ سیٹ پرامیدوارراکیش پاریک کی مخالفت میں سابق ممبراسمبلی برہم دیوکماوت نے مخالفت کی ہے۔ بسی سے ٹکٹ کٹنے سے ناراض لکشمن مینا کے حامیوں نے جے پورمیں کانگریس دفترپہنچ کراحتجاج کیا۔ اٹروباراں سے کانگریس میں باغی دھرم راج مہرا آزاد امیدوارکے طورپرآج نامزدگی کررہے ہیں۔ اس کے علاوہ بھی کئی دعویداروں کے حامیوں نے جم کراحتجاج کیا ہے۔

جے پورمیں کشن پول اسمبلی حلقہ سے ٹکٹ نہیں ملنے سے ناراض ریاستی جنرل سکریٹری اورسابق میئرجیوتی کھنڈیلوال نےعہدے سے استعفیٰ دے دیا ہے۔ باڑمیرمیں کانگریس ایس سی/ ایس ٹی شعبہ کے جودھپورکوآرڈینیٹرگوپارام میگھوال نے استعفیٰ دے دیا۔  سروہی سے سینم لوڑھا کا ٹکٹ کٹنے کے بعد اب تک تقریباً 20 سے زیادہ کانگریس عہدیداروں کے استعفے ریاستی کانگریس صدرسچن پائلٹ کو میل کئے جاچکے ہیں۔

یہ بھی پڑھیں:    راجستھان انتخابات : کانگریس کی پہلی فہرست جاری، 20 خواتین سمیت 46 نئے چہرے ، صرف 9 مسلم امیدوار

یہ بھی پڑھیں:  راجستھان اسمبلی انتخابات 2018: اشوک گہلوت اور سچن پائلٹ دونوں الیکشن لڑیں گے

یہ بھی پڑھیں:  سروے : چھتیس گڑھ ، راجستھان اور مدھیہ پردیش میں بی جے پی کو جھٹکا ، کانگریس کی ہوسکتی ہے واپسی

یہ بھی پڑھیں:    مدھیہ پردیش : کانگریس لیڈر کمل ناتھ کی کارکنوں کو نصیحت ، ذات اور مذہب کے موضوع پر نہ کریں بات

یہ بھی پڑھیں:     مدھیہ پردیش میں کانگریس نے جاری کی پہلی فہرست، 155 امیدواروں کا اعلان
First published: Nov 16, 2018 06:45 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading