ہوم » نیوز » مغربی ہندوستان

بلیک فنگس کی وجہ سے اب اس انجیکشن کی کھپت ہوئی تیز ، گجرات میں مچی افراتفری

ملک میں کئی شہروں کے اسپتالوں سے اب کورونا مریضوں کو بلیک فنگس انفیکشن (Black Fungus Infection) ہونے کے معاملات بھی سامنے آرہے ہیں ۔

  • Share this:
بلیک فنگس کی وجہ سے اب اس انجیکشن کی کھپت ہوئی تیز ، گجرات میں مچی افراتفری
بلیک فنگس کی وجہ سے اب اس انجیکشن کی کھپت ہوئی تیز ، گجرات میں مچی افراتفری

گاندھی نگر : ملک میں کئی شہروں کے اسپتالوں سے اب کورونا مریضوں کو بلیک فنگس انفیکشن ہونے کے معاملات بھی سامنے آرہے ہیں ۔ قومی راجدھانی دہلی کے اسپتالوں کے بعد اب گجرات کے اسپتالوں میں ایسے مریض ملے ہیں ، جو فنگل انفیکشن ۔ میوکومائیکوسس یا بلیک فنگس سے متاثر پایا گیا ہے ۔ تیزی سے بڑھ رہے کورونا انفیکشن کے معاملات کے درمیان اس کو ایک نئی اور نایاب بیماری بتایا جارہا ہے ۔ ریمیڈیسیور کے بعد میوکورمائیکوسس کے انجیکشن کی بھی بھاری کمی ہے ۔ نتیجہ کے طور پر مریضوں کی اہل خانہ کو انجیکشن لینے کیلئے کئی میڈیکل سینٹروں پرجانا پڑتا ہے ۔


میوکورمائیکوسس کا علاج انتہائی سنگین اور پیچیدہ ہے ۔ علاج کے دوران مریض کو کو 15 سے 21 دنوں کیلئے ایمفوسن بی کا انجیکشن دیا جاتا ہے ۔ اگر ضروری ہو تو دوربین کے توسط سے ناک سے فنگس کو ہٹانے کیلئے سرجری بھی کی جاتی ہے ۔ تب بھی انجیکشن علاج جاری رہتا ہے ۔ اس علاج کیلئے مریض کے وزن کی بنیاد پر یومیہ چھ سے نو انجیکشن کی ضرورت ہوتی ہے ۔ ایک انجیکشن کی لاگت چھ سے سات ہزار روپے ہوتی ہے اور 20 سے 28 دنوں کے انجیکشن کورس میں 13 سے 14 لاکھ روپے لگ جاتے ہیں ۔


راج کوٹ میں اس کے معاملات بڑھ رہے ہیں اور اب سوراشٹر کے سبھی مریض علاج کیلئے راج کوٹ میں سب سے بڑا 250 بستروں والا میوکورمائیکوسس وارڈ بنایا گیا ہے ۔ میڈیکل انسپکٹر ڈٓاکٹر آر ایس ترویدی کے مطابق سوراشٹر سے مریض راج کوٹ آر ہے ہیں ۔ اس کے نتیجہ میں مریضوں کی تعداد بڑھ رہی ہے ۔


ٹراما سینٹر کا بھون خالی کیا جارہا ہے اور کورونا کے مریضوں کو وہاں منتقل کیا جارہا ہے ۔ ساتھ ہی مریضوں کو وہاں بھرتی کیا جارہا ہے ۔ اس انفیکشن میں سرجری کے بعد انجیکشن بھی اہم ہے ، اس لئے ایک کروڑ روپے سے زیادہ کے انجیکشن کی رقم بھی محکمہ صحت کے ذریعہ تقسیم کی گئی ہے ۔

دوسری جانب ریاست میں بڑھتے کیسز اور مرض کو قابو میں کرنے اور علاج کیلئے وزیر اعلی روپانی کی زیر صدرات ایک میٹنگ منعقد کی گئی ، جس کے بعد سرکار نے احمد آباد ، وڈودرا ، سورت ، راجکوٹ ، بھاونگر ، جام نگر میں متاثرین کیلئے الگ وارڈ شروع کرنے کی تیاری شروع کردی ہے  ۔ اس کے علاوہ ایمفوٹیریسن بی 50 ایم جی کے 5000 انجیکشن خریدنے کا حکم دیا گیا ہے ۔
Published by: Imtiyaz Saqibe
First published: May 10, 2021 04:47 PM IST