உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    اپنی ہی بیوی کے ساتھ شوہر نے پیسے دیکر دوست کے ساتھ مل کر کرایا انتہائی گھنونا کام، پولیس نے کھولا راز تو اڑ گئے سب کے ہوش

    علامتی تصویر

    علامتی تصویر

    پولیس نے ملزم شوہر اور اس کے دوست سمیت سپاری لیکر اس واردات کو انجام دینے والے چاروں ملزموں کو گرفتار (Accused arrested) کر لیا ہے۔

    • Share this:
      کوٹہ۔ دیہی پولیس نے آج ایانا پولیس اسٹیشن کے علاقے میں 6 دن پہلے ہوئے قتل  (Murder) کے سنسنی خیز واقعے کا انکشاف کیا ہے۔ خاتون کا قتل کسی اور نے نہیں کیا تھا بلکہ اس کے اپنے شوہر (Husband) نے اپنے دوست کے ساتھ مل کر دو بدمعاشوں کو 2 لاکھ روپے کی سپاری دیکر کروایا تھا۔ پولیس نے ملزم شوہر اور اس کے دوست  سمیت سپاری لیکر اس واردات کو انجام دینے والے چاروں ملزموں کو گرفتار (Accused arrested)  کر لیا ہے۔

      غصہ اتارنے کیلئے شوہر نے بھی کئے بیوی کے مردہ جسم پر وار
      ایس پی شرد چودھری  نے پورے معاملے کا انکشاف کرتے ہوئے بتایا کہ ملزم گوپال گوتم اور اس کی بیوی نیلییما کے درمیان جھگڑا رہا کرتا تھا لیکن گوپال بیوی کو ایسی سازش رچ کر موت کے گھاٹ اتارے گا اس کا کسی کو کوئی اندازہ نہیں تھا۔ گوپال نے بیوی کو ٹھکانے لگانے کے لئے اپنے گاؤں کے دوست منا علی کے ساتھ مل کر آصف اور سہیل کو دو لاکھ روپئے کی  سپاری دی۔ اس کے بعد گزشتہ 12  نومبر کو آصف اور سہیل نے منصوبہ بند طریقے سے موٹر سائیکل پر جا رہے گوپال اور نیلیما کو پکڑ لیا بعد میں نیلیما کو چاقو سے قتل کر دیا۔ نیلیما کی موت کے بعد گوپال نے بھی اپنا غصہ اتارنے کے لئے اس پر تابڑ توڑ چاقو سے وار کئے۔ بعد میں اس نے پولیس کو گمراہ کرنے کے لئے لوٹ کی واردات ہونے اور بیوی کے قتل کئے جانے کا معاملہ تھانے میں درج کروادیا۔

      جسم پر چوٹوں تقریبا 48  نشان تھے

      پولیس کی جانچ میں سامنے آیا کہ مہلوک  نیلیما کے جسم پر چوٹوں کے تقریبا 48  نشان تھے۔ بعد میں کوٹہ کے دیہی ایس پی پارس کین کی قیادت میں پولیس قتل معاملے کا انکشاف کرنے میں مصروف ہوئی۔ پولیس نے تمام پہلوؤں پر سنجیدگی سے جانچ کرکے کڑی جوڑتے ہوئے زخمی ہوکر داخل ہونے کا ناٹک کر رہے شوہر گوپال سے سختی سے پوچھ۔گچھ کی۔ معاملے کی پرتیں کھلنے کے بعد پولیس نے گوپال اور اس کے دوست منا علی سمیت سپاری لیکر قتل کرنے والے آصف اور سہیل کو گرفتار کر لیا۔ پولیس نے ان چاروں ملزمون کو ریمانڈ پر لیکر ان سے پوچ۔تاچھ کرنے میں مصروف ہو گئی ہے۔ 
      Published by:sana Naeem
      First published: