உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    عاشق کے ساتھ مل کر بیوی نےشوہر کا کیا قتل، لاش کو 4 ٹکڑوں میں کاٹ کر کچن میں کیا دفن

     بیوی کو شوہر کے قتل کے الزام میں گرفتار کر لیا گیا ہے۔ غور طلب ہے کہ اترپردیش کے گونڈا میں رئیس شیخ کی 2012 میں 27 سالہ شاہدہ سے شادی ہوئی تھی۔

    بیوی کو شوہر کے قتل کے الزام میں گرفتار کر لیا گیا ہے۔ غور طلب ہے کہ اترپردیش کے گونڈا میں رئیس شیخ کی 2012 میں 27 سالہ شاہدہ سے شادی ہوئی تھی۔

    بیوی کو شوہر کے قتل کے الزام میں گرفتار کر لیا گیا ہے۔ غور طلب ہے کہ اترپردیش کے گونڈا میں رئیس شیخ کی 2012 میں 27 سالہ شاہدہ سے شادی ہوئی تھی۔

    • Share this:
    دہیسر ایسٹ کے خان کمپاؤنڈ میں ایک دل دہلا دینے والا واقعہ سامنے آیا ہے۔ قتل کا خلاصہ 6 سالہ بچی کی نشاندہی کے بعد ہوا جس کے سامنے اس کی ماں نے اپنے عاشق کے ساتھ مل کر شوہر کو قتل کر دیا تھا۔ اس واقعے کے 11 دن بعد بیٹی کے کہنے پر دہیسر پولیس نے گھر کی کچن کھود کر باپ کی لاش باہر نکالی۔ بیوی کو شوہر کے قتل کے الزام میں گرفتار کر لیا گیا ہے۔ غور طلب ہے کہ اترپردیش کے گونڈا میں رئیس شیخ کی 2012 میں 27 سالہ شاہدہ سے شادی ہوئی تھی۔

    شادی کے بعد دونوں دہیسر ایسٹ کے خان کمپاؤنڈ میں کرائے کے مکان میں رہ رہے تھے۔ رئیس کپڑے کی دکان میں کام کرتا تھا۔بیوی گھر میں اپنی 6 سالہ بیٹی اور ڈھائی سالہ بیٹے کے ساتھ رہتی تھی۔ ادھر شاہدہ کا پڑوس میں رہنے والے انیکٹ عرف امیت مشرا سے نا جائز تعلقات بن گئے۔ رئیس کو جب اس کے بارے میں معلوم ہوا تو اس نے برہمی کا اظہار کیا۔ ایک دن رئیس نے دونوں کو رنگے ہاتھوں پکڑ لیا اور اسی دوران انہوں نے رئیس پر چاقو سے حملہ کرکے قتل کر دیا۔

    رئیس کے جسم کو چار ٹکڑوں میں کاٹ کر کچن میں دفن کردیا۔جب 6 سالہ بیٹی نے یہ سارا واقعہ دیکھا تو شاہدہ نے بیٹی کو دھمکی دی کہ اگر اس نے کسی کو بتایا تو وہ اسے بھی جان سے مار ڈالے گی اور رئیس کے گھر والوں کو بتا یا کہ بغیر بتائے رئیس 11 دنوں سے لاپتہ ہے۔ تاہم رئیس کے دوستوں نے پولیس میں شکایت درج کرائی کہ رئیس غائب ہے جب رئیس کا بھائی گاؤں سے گھر آیا تو 6 سالہ بچی نے اپنے چاچاسے اپنی ما ں اور عاشق کے گھنونے فعل کا راز کھول دیا۔



    اس کے بعد بھائی نے پولیس کو ساری بات بتا دی . نشاندہی کے بعد پولیس نے کھدائی کی اور رئیس کی لاش برآمد کرلی۔ قتل کیس میں دہیسر پولیس نے آئی پی سی کی دفعہ 302 ، 201،177 اور 34 کے تحت مقدمہ درج کرکے دو لوگوں کو گرفتار کیا ہے مزید تفتیش جاری ہے۔
    Published by:Sana Naeem
    First published: