ہوم » نیوز » مغربی ہندوستان

چھبیس الیون کا گناہگار ڈیوڈ ہیڈلی دے رہا ہے عدالت میں گواہی، کئے کئی انکشافات

ممبئی۔ لشکر طیبہ کا پاکستانی۔ امریکی رکن ڈیوڈ ہیڈلی پہلی بار آج ممبئی کی ایک عدالت کے سامنے ویڈیو کانفرنسنگ کے ذریعے گواہی دے رہا ہے۔

  • IBN Khabar
  • Last Updated: Feb 08, 2016 10:55 AM IST
  • Share this:
  • author image
    NEWS18-Urdu
چھبیس الیون کا گناہگار ڈیوڈ ہیڈلی دے رہا ہے عدالت میں گواہی، کئے کئی انکشافات
ممبئی۔ لشکر طیبہ کا پاکستانی۔ امریکی رکن ڈیوڈ ہیڈلی پہلی بار آج ممبئی کی ایک عدالت کے سامنے ویڈیو کانفرنسنگ کے ذریعے گواہی دے رہا ہے۔

ممبئی۔ لشکر طیبہ کا پاکستانی۔ امریکی رکن ڈیوڈ ہیڈلی پہلی بار آج ممبئی کی ایک عدالت کے سامنے ویڈیو کانفرنسنگ کے ذریعے گواہی دے رہا ہے۔ اسے 26/11 کے ممبئی دہشت گردانہ حملوں کے معاملے میں سرکاری گواہ بنایا گیا ہے۔ وہ سازش کے بارے میں نئے انکشافات کر سکتا ہے۔


سرکاری وکیل اجول نکم ہیڈلی سے سوال پوچھ رہے ہیں۔ اجول کے مطابق 26/11 کے حملے کے پیچھے کئی حقائق کو سامنے لانے کے لئے ہیڈلی کی گواہی اہم ہے۔ اجول نے کہا کہ 26/11 کے حملے کے پیچھے بہت سے حقائق کو سامنے لانے کے لئے ہیڈلی کی گواہی اہم ترین ہے۔ تاہم انہوں نے زیادہ معلومات دینے سے انکار کر دیا۔


ابو جندال بھی پیش


ویڈیو کانفرنسنگ کے ذریعے دہشت گرد ابو جندال بھی عدالت میں گواہی دے رہا ہے۔ جندال نے عدالت میں کہا کہ جو کورٹ میں ثبوت پیش کئے جا رہے ہیں وہ غلط ہیں، میں اسے نہیں مانتا۔ مجھے وکیل سے بات کرنے کی اجازت ملے۔

ہیڈلی منگل کو بھی صبح سات سے دوپہر 12:30 بجے کے درمیان ویڈیو کانفرنسنگ کے ذریعے عدالت میں گواہی دے گا۔ اس درمیان ممبئی کے ایک پولیس افسر نے کہا کہ ہیڈلی مجرمانہ سازش کا وسیع پہلو بتا سکتا ہے اور حملوں میں ملوث تمام لوگوں کی معلومات دے سکتا ہے۔ ممبئی دہشت گردانہ حملوں میں 166 افراد ہلاک ہو گئے تھے اور 309 زخمی ہو گئے تھے۔

افسر نے کہا کہ وہ معاملے میں پاکستان کے رول کو بھی اجاگر کر سکتا ہے۔ عدالت نے 10 دسمبر، 2015 کو ہیڈلی کو سرکاری گواہ بنایا تھا اور اسے آٹھ فروری کو عدالت کے سامنے گواہی دینے کی ہدایت دی تھی۔

فی الحال ممبئی حملوں میں اپنے کردار کو لے کر امریکہ میں 35 سال قید کی سزا کاٹ رہے ہیڈلی نے خصوصی جج جی اے سنپ سے کہا تھا کہ اگر اسے معاف کیا جاتا ہے تو وہ گواہی دینے کو تیار ہے۔ جج سنپ نے ہیڈلی کو کچھ شرائط کی بنیاد پر سرکاری گواہ بنایا تھا اور اسے معافی دی تھی۔
First published: Feb 08, 2016 10:49 AM IST