ہوم » نیوز » مغربی ہندوستان

وزیر دفاع منوہر پاریکر کا منتازع تبصرہ ، تنقید کرنے والوں کو دی یہ نصیحت

پاریکر نے ان پر تنقید کرنے والے گوا میڈیا کے ایک گروپ پر نشانہ سادھتے ہوئے کہا کہ تشہیر کے لئے غیر ضروری باتیں بولتے رہنے والوں کو ان کا مشورہ ہے کہ وہ شہرت حاصل کرنے کے لئے کپڑے اتار کر ناچیں

  • IANS
  • Last Updated: Dec 20, 2016 07:45 PM IST
  • Share this:
  • author image
    NEWS18-Urdu
وزیر دفاع منوہر پاریکر کا منتازع تبصرہ ، تنقید کرنے والوں کو دی یہ نصیحت
پاریکر نے ان پر تنقید کرنے والے گوا میڈیا کے ایک گروپ پر نشانہ سادھتے ہوئے کہا کہ تشہیر کے لئے غیر ضروری باتیں بولتے رہنے والوں کو ان کا مشورہ ہے کہ وہ شہرت حاصل کرنے کے لئے کپڑے اتار کر ناچیں

پنجی : گوا کے سابق وزیر اعلی اور موجودہ وزیر دفاع منوہر پاریکر نے ایک مرتبہ پھر متنازع بیان دیا ہے۔ پاریکر نے ان پر تنقید کرنے والے گوا میڈیا کے ایک گروپ پر نشانہ سادھتے ہوئے کہا کہ تشہیر کے لئے غیر ضروری باتیں بولتے رہنے والوں کو ان کا مشورہ ہے کہ وہ شہرت حاصل کرنے کے لئے کپڑے اتار کر ناچیں۔

پنجی سے 40 کلومیٹر دور شمالی گوا کے ستتاري سب ڈسٹرکٹ میں ایک اجتماع کے دوران پاریکر نے پیر کو یہ متنازع تبصرہ کیا۔ انہوں نے کہا کہ مجھے اب بھی یاد ہے کہ 1968 میں واٹر گیٹ اسکینڈل پر (صدر رچرڈ) نکسن کو مشورہ دیتے ہوئے انہوں نے (ایک ایڈیٹر نے) مراٹھی میں لمبا چوڑا اداریہ لکھ ڈالا تھا۔ آخر مراٹھی میں لکھا ان کا مضمون بھلا نکسن تک کیسے پہنچتا؟ وہ (نکسن) تو امریکہ میں تھے۔

پاریکر نے کہا کہ کچھ لوگ اپنی حدیں نہیں سمجھتے، وہ بکواس کرتے رہتے ہیں، ان کے لئے میری کچھ اچھی تجاویز ہیں، اپنا کپڑے اتارو اور ننگا ناچ کرو۔ گوا کی علاقائی زبان کے ایک ایڈیٹر کا ذکر کرتے ہوئے پاریکر نے کہا کہ اس سے کہیں بہتر طریقے سے شہرت حاصل کی جا سکتی ہے۔

انہوں نے کہا کہ شہرت حاصل کرنے کے لئے غلط استعمال کرنے والوں کو میں ایک مشورہ دیتا ہوں، یہاں سے ایک اخبار نکلتا تھا، اب بھی شائع ہو رہا ہے، میں اس کا نام نہیں لوں گا، اس کے ایک ایڈیٹر ہیں، وہ بین الاقوامی سطح کے ایڈیٹر تھے، انہیں بڑھاپے میں یہاں لایا گیا تھا، ان کے اخبار کی صرف ایک ہزار کاپیاں بکتی تھیں۔

First published: Dec 20, 2016 07:45 PM IST