உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    اسلام کی تعلیمات امن وبھائی چارگی کا درس دیتی ہیں،سچا مسلمان کبھی تشدد کا راستہ اختیار نہیں کرسکتا: فڑنویس

    مہاراشٹر کے وزیر اعلیٰ فڑنویس: فائل فوٹو

    مہاراشٹر کے وزیر اعلیٰ فڑنویس: فائل فوٹو

    ممبئی۔ مہاراشٹر کے وزیراعلیٰ دیویندرفڑنویس نے گزشتہ شب یہاں کہا کہ اسلام کی تعلیمات امن،اتحاد وبھائی چارگی کا درس دیتی ہیں اور ایک سچا مسلمان کبھی تشدد کا راستہ اختیار نہیں کرسکتا ۔

    • UNI
    • Last Updated :
    • Share this:

      ممبئی۔ مہاراشٹر کے وزیراعلیٰ دیویندرفڑنویس نے گزشتہ شب یہاں کہا کہ اسلام کی تعلیمات امن،اتحاد وبھائی چارگی کا درس دیتی ہیں اور ایک سچا مسلمان کبھی تشدد کا راستہ اختیار نہیں کرسکتا ۔ وزیراعلیٰ مسلمانوں کے ایک تجارتی طبقہ میمن برادری کے ایک سالانہ اجلاس سے خطاب کررہے تھے ،جس کے دوران شرکاء نے دنیا میں امن اور دہشت گردی کیخلاف جنگ کرنے کاعہد لیا اورتمام میمن برادریوں کو ایک متحد ہونے کی اپیل کی ۔ تقریب میں دہشت گردی کی مذمت اور فرقہ وارانہ ہم آہنگی سمیت کئی اہم قراردادیں بھی منظورکی گئیں اور یہ عہد کیاگیا کہ دہشت گردی کے خلاف ان کی مہم کو موثر بنایا جائے گا۔


      اس اجلاس میں مہاراشٹر کے وزیر اعلیٰ دیویندر فڑنویس نے مزید کہا کہ اس ملک اور ریاست کی ترقی کے لیے مسلمانوں کی اور میمن برادری کی خدمات قابل ستائش ہیں۔ ،انہوں نے کہا کہ اسلامی تعلیمات کے مطابق ایک مسلمان اپنے اللہ کی رضا اور خوشنودی کے لیے بہترکام کرتا ہے۔ وزیراعلیٰ نے یقین دلایا کہ سرکارکے ’سب کا ساتھ سب کا وکاس ‘ کے تحت ان کی حکومت ہر کسی کی ترقی اور فلاح وبہبود کی اسکیموں پر عمل کرے گی تاکہ سبھی کو ان کے حقوق مل سکیں۔انہوں نے وعدہ کیا کہ میمن برادری کے مسائل کو حل کرنے کی ہرممکن کوشش کی جائے گی۔


      اس موقع پر راجیہ سبھا کے سنیئررکن ایڈوکیٹ مجید میمن نے کہا کہ ملک اور ریاست مہاراشٹر کی ترقی وفروغ میں میمن برادری نے اہم خدمات انجام دی ہیں ۔مستقبل میں بھی اس فرقے کے ذریعے قوم و ملت کی ترقی کے لیے مختلف منصوبوں پر عمل کیاجائے گا۔ مسٹرمجید میمن نے مزید کہاکہ مہاراشٹر میں قحط سالی اور پانی کی قلت کے سلسلے میں حکومت کے اقدامات کی ہرممکن حمایت کا وعدہ آل انڈیا میمن جماعت فیڈریشن (اے آئی ایم جے ایف) نے کیا اور مراٹھواڑہ اور ممبئی ،تھانے ،پنے اور دیگر شہروں میں پانی کی شدید قلت ہے ،اس لیے فیڈریشن کے ذریعے ٹیوب ویل کی کھدائی کرائی جارہی ہے۔ میمن فیڈریشن کے صدر اقبال میمن نے کہا کہ میمن برادری کے لوگ یواے ای،سعودی عرب،جنوبی ایشیاء،جنوبی افریقہ ،برطانیہ اور کینڈاسمیت دنیا بھر میں موجود ہیں۔پڑوسی ممالک کے ساتھ ساتھ ہندوستان میں گجرات میں بڑی تعداد میں ہیں۔ملک کے شہری علاقوں میں تجارت کرتے ہیں اور ان کے متعدد فلاحی ادارے ہیں۔




      First published: