ہوم » نیوز » مغربی ہندوستان

مہاراشٹر: فڑنویس نے ادھو ٹھاکرے کی چائے پارٹی میں جانے سے کیا انکار، کہا- ساورکر کی توہین کرنے والوں کے ساتھ چائے نہیں

مہاراشٹرمیں شیو سینا، کانگریس اور این سی پی کے ساتھ مل کر حکومت چلا رہی ہے۔ اس لئے بی جے پی کانگریس کے ساتھ شیو سینا کو بھی گھیر رہی ہے۔

  • Share this:
مہاراشٹر: فڑنویس نے ادھو ٹھاکرے کی چائے پارٹی میں جانے سے کیا انکار، کہا- ساورکر کی توہین کرنے والوں کے ساتھ چائے نہیں
مہاراشٹر کے سابق وزیراعلیٰ دیویندر فڑنویس نے ادھو ٹھاکرے کی چائے پارٹی میں جانے سے انکار کردیا۔

ممبئی: ویرساورکرپرکانگریس کے سابق صدرراہل گاندھی کے دیئے بیان پرتنازعہ مسلسل بڑھتا جارہا ہے۔ بی جے پی، کانگریس اورراہل گاندھی کے ساتھ ساتھ شیوسینا کو بھی گھیر رہی ہے۔ حالانکہ شیوسینا کی طرف سے سنجے راؤت نے بیان دے کراپنی حالت کو واضح کرنےکی کوشش کی ہے، لیکن اب تک ادھوٹھاکرے کا کوئی بیان نہیں آیا ہے۔ بی جے پی اسی لئے حملہ آورہے۔ اسی ضمن میں اب مہاراشٹرکے سابق وزیراعلیٰ دیویندر فڑنویس نے ادھو ٹھاکرے کی ٹی پارٹی میں جانے سے انکارکیا ہے۔ انہوں نےکہا ہے کہ جنہوں نے ساورکرکی توہین کی، ان کے ساتھ چائے نہیں پینا۔


دیویندرفڑنویس نے کہا، بی جے پی ریاستی  اسمبلی انتخابات کے سرمائی اجلاس سے قبل وزیراعلیٰ ادھوٹھاکرے کے ذریعہ اتوارکو دی گئی چائے پارٹی کا بھی بائیکاٹ کرے گی۔ انہوں نےاپنی ٹیم کےٹوئٹ کوری ٹوئٹ کرتے ہوئےلکھا، کوئی وزیرنہیں، کوئی فیصلہ نہیں، یہ صرف ایڈجسمنٹ حکومت ہے۔ ویرساورکرکی توہین کرنے والوں کے ساتھ ہم چائے نہیں پیئیں گے۔


دیویندرفڑنویس نےاس معاملےکو لے کر ایک کے بعد ایک چارٹوئٹ کئے، اس میں انہوں نے لکھا، اقتدارکےلئے شیوسینا بے بس ہے۔ شیوسینا کل تک جتنی جارح تھی، اب اتنی رہی نہیں۔ راہل گاندھی نے ویرساورکرکی گاتھا نہیں دیکھی۔ راہل گاندھی ویرساورکرکے ذریعہ دی گئی قربانی کو نہیں سمجھ سکتے، لیکن ملک اس کے خلاف مشتعل ہوچکا ہے، لیکن شیوسینا ایسا سودا کرے گی، اس کا تصورہم نے نہیں کیا تھا۔


واضح رہےکہ ریاستی اسمبلی کے سرمائی اجلاس پیرسے ناگپورمیں شروع اور 21 دسمبر کوختم ہوگا۔ دیویندرفڑنویس نےاتوارکو کہا کہ کانگریس لیڈرراہل گاندھی کواپنی 'میرا نام راہل ساورکرنہیں' والے تبصرہ کےلئے بلا شرط معافی مانگنی چاہئے۔
First published: Dec 15, 2019 08:03 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading