ہوم » نیوز » مغربی ہندوستان

ممبئی کے بعد ممبئی مضافاتی مرکزی عید میلاد النبی جلوس کو بھی مشروط اجازت ہوگی 

ممبئی شہر میں خلافت ہاؤس کے جلوس عید میلاد النبی صلی اللہ علیہ وسلم کے ہمراہ اب مضافات کے قدیم جلوس محمدی کو بھی مشروط اجازت ہوگی ۔

  • Share this:
ممبئی کے بعد ممبئی مضافاتی مرکزی عید میلاد النبی جلوس کو بھی مشروط اجازت ہوگی 
ممبئی کے بعد ممبئی مضافاتی مرکزی عید میلاد النبی جلوس کو بھی مشروط اجازت ہوگی 

ممبئی شہر میں خلافت ہاؤس کے جلوس عید میلاد النبی صلی اللہ علیہ وسلم کے ہمراہ اب مضافات کے قدیم جلوس محمدی کو بھی مشروط اجازت ہوگی  ۔ یہ اطلاع وزارت داخلہ اور ممبئی پولیس کے معتبر ذرائع نے دی ہے ۔ مضافاتی اضلاع کی بنیاد پر یہ اجازت دینے کا فیصلہ پولیس نے کیا ہے ، کیونکہ ممبئی شہر اور مضافات میں علاحدہ کلکٹر ہیں اور یہ دو حصوں میں منقسیم ہے ، اسی بنیاد پر مرکزی عید میلاد النبی کمیٹی کے چیئر مین سابق وزیر اقلیتی امور اور کانگریس کے سنیئر لیڈر محمد عارف نسیم خان نے جلوس محمدی کی اجازت طلب کی تھی اور کہا تھا کہ یہ جلوس انتہائی قدیم ہے اور اسے مضافات کے سب سے بڑے جلوس کے طور پر تسلیم کیا جاتا ہے ۔ 25 برس سے زائد عرصہ سے جاری اس روایت کو برقرار رکھنے کیلئے جلوس محمدی کی اجازت دینا  لازمی ہے ۔


اس سلسلے میں جلوس کمیٹیوں کی میٹنگ بھی عارف نسیم خان نے منعقد کی تھی اور کہا تھا کہ مضافاتی علاقوں کی نمائندگی کرنے والے اس جلوس محمدی کو اجازت ملنی ضروری ہے ، جس کے بعد یہ اطلاع ملی ہے کہ وزارت داخلہ اور پولیس مضافاتی جلوس کو بھی اجازت دے گی ۔ جبکہ خلافت جلوس کو ہی ممبئی میں اس سے قبل اجازت دی گئی تھی ، لیکن عید میلاد النبی کی جو گائیڈ لائن جاری ہوئی ہے ، اس میں کہا گیا ہے کہ ہر ضلع میں ہر عید میلاد النبی کے جلوس کو مشروط اجازت دی جائے گی ۔ اسی بنیاد پر مضافاتی اضلاع سے اجازت طلب کی گئی تھی اور اس میں مرکزی عید میلاد النبی جلوس کمیٹی کو کامیابی بھی حاصل ہوئی ہے ۔


ممبئی پولیس کمشنر پرم بیر سنگھ اور ایڈیشنل پولیس کمشنر سنیل کولہے بھی اس متعلق غور و خوص کر رہے ہیں جبکہ ممبئی پولیس کے ذرائع نے اطلاع دی ہے کہ جلوس محمدی صلی اللہ علیہ وسلم کو مضافاتی علاقوں میں بھی اجازت دی جائے گی اور مضافاتی علاقوں کے جلوس کی نمائندگی مرکزی عید میلاد النبی کمیٹی کا جلوس کریگا ، جس کے چیئر مین محمد عارف نسیم خان ہیں ۔ سنیل کولہے نے بتایا کہ گائیڈ لائن کے مطابق ہی جلوس عید میلاد النبی صلی اللہ علیہ وسلم کو اجازت دی جائے گی اس میں کورونا وائرس کیلئے وضع کردہ اصولوں کی پاسداری لازمی  ہوگی ۔ خلافت ہاؤس کا دس نفوس پر مشتمل جلوس ہوگا جبکہ پانچ نفوس کو محفل میلاد کی اجازت خلافت ہاؤس میں ہی اجازت دی گئی ہے ۔ اسی کے ساتھ ایک ہی ٹرک کو مشروط اجازت  دی گئی ہے۔


جلوس کے پیش نظر پولیس کا سخت حفاظتی انتظامات ہوگا جبکہ ممبئی شہر میں پولیس نے 144 میں توسیع کر دی ہے اس کے مطابق حکم امتناعی کے دوران ایک سے زائد فرد کے فضول کھڑے رہنے پر پابندی ہے ۔ مرکزی عید میلاد ا لنبی صلی اللہ علیہ وسلم کو بھی خلافت ہاؤس کے جلوس کے طرز پر اجازت دی جاسکتی ہے یہ ممبئی پولیس کے ذرائع نے واضح کیا ہے ۔
Published by: Imtiyaz Saqibe
First published: Oct 28, 2020 12:34 PM IST