ہوم » نیوز » مغربی ہندوستان

''ممبئی سمیت ریاست بھر میں جلوس عیدمیلاد النبی کی اجازت دی جائے''

سابق وزیر اقلیتی امور اور سینئر کانگریسی لیڈر عارف نسیم خان نے کہا کہ سرکار اصول و ضوابط کے ساتھ جلوس محمدی کو اجازت دے اور ایسے حالات پیدا کرنے سے گریز کرے جس سے بدامنی اور اضطراب پیدا ہوتا ہے۔

  • Share this:
''ممبئی سمیت ریاست بھر میں جلوس عیدمیلاد النبی کی اجازت دی جائے''
''ممبئی سمیت ریاست بھر میں جلوس عیدمیلاد النبی کی اجازت دی جائے''

ممبئی۔ ریاست مہاراشٹر میں جلوس عید میلاد النبی صلی اللہ علیہ وسلم نکالنے کی اجازت دی جائے اور سرکار اس پر اپنی گائڈ لائن اور رہنما خطوط جمعہ تک جاری کرے۔ حکومت کوئی بھی ایسی صورتحال پیدا کرنے سے گریز کرے جس سے مسلمانوں میں اضطراب پیدا ہو۔ یہ مطالبہ عید کمیٹی جلوس کمیٹی کے ارکان نمائندگان اور رکن اسمبلی کانگریس امین پٹیل، سابق وزیر اقلیتی امور عارف نسیم خان اور خلافت ہاؤس جلوس کمیٹی کے چئیرمین سرفراز آرزو نے کیا ہے۔


ریاستی وزیر داخلہ انیل دیشمکھ کے ہمراہ میٹنگ میں کہا گیا ہے کہ ریاست بھر میں آٹھ سو سے زائد چھوٹے اور بڑے جلوس عید میلاد النبی کے موقع پر نکالےجاتے ہیں، ان جلوس کو مشروط طور پر اجازت دی جائے اور جلوس میں کورونا اصولوں اور احتیاطی تدابیر پر سختی سے پابندی کی جائے۔


سابق وزیر اقلیتی امور اور سینئر کانگریسی لیڈر عارف نسیم خان نے کہا کہ سرکار اصول و ضوابط کے ساتھ جلوس محمدی کو اجازت دے اور ایسے حالات پیدا کرنے سے گریز کرے جس سے بدامنی اور اضطراب  پیدا ہوتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ ہم سرکار کی ہدایات اور اس کے رہنما خطوط پر امن وامان کے ساتھ جلوس محمدی نکالنے کو تیار ہیں،  اس لئے سرکار جلد از جلد گائڈ لائن جاری کرے اور مسلمانوں کے جذبات کا خیال رکھے۔


وہیں، سرفراز آرزو نے کہا کہ ہمارے مطالبات ہم نے پیش کر دئیے ہیں۔ اب اس پر وزیراعلی کو فیصلہ لینا ہو گا کیونکہ یہی مطالبات ان کے روبرو رکھے جائیں گے اور پھر گائڈ لائن اوراجازت نامہ کا اعلان ہو گا۔ انہوں نے کہا کہ ہمیں امید ہے کہ سرکار ہمارےجذبات کا خیال رکھے گی اور ہمیں ہائی کورٹ جانے کی ضرورت نہیں پڑے گی۔ اس اہم میٹنگ میں مولانا عبدالجبار ماہر القادری، اقبال میمن افیسر سمیت اہم اشخاص موجود تھے۔
Published by: Nadeem Ahmad
First published: Oct 21, 2020 08:59 AM IST