உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    راجستھان :پرینکا گاندھی سے غیر قانونی وصولی کا انکشاف، وسندھرا راجے کو کرنی پڑی مداخلت

    جے پور: راجستھان میں پرینکا گاندھی سمیت کئی وی آئی پی شخصیات سے غیر قانونی وصولی کا سنسنی خیز انکشاف ہوا ہے

    جے پور: راجستھان میں پرینکا گاندھی سمیت کئی وی آئی پی شخصیات سے غیر قانونی وصولی کا سنسنی خیز انکشاف ہوا ہے

    جے پور: راجستھان میں پرینکا گاندھی سمیت کئی وی آئی پی شخصیات سے غیر قانونی وصولی کا سنسنی خیز انکشاف ہوا ہے

    • News18
    • Last Updated :
    • Share this:

      جے پور: راجستھان میں پرینکا گاندھی سمیت کئی وی آئی پی شخصیات سے غیر قانونی وصولی کا سنسنی خیز انکشاف ہوا ہے اور یہ غیر قانونی وصولی بھی سرکاری کارکنان نے کی ہے۔تاہم وزیر اعلی وسندھرا راجے کی مداخلتکے بعد اب غیر قانونی وصولی کرنے والے افسر ان نشانے پر ہیں۔


      سترہ اضلاع کے کلکٹر اور مقامی انتظامیہ کے حکام نے پرینکا گاندھی سمیت دیگر وی آئی پیز کے پرائیویٹ طیارہ کمپنیوں سے ہوائی پٹی پر لینڈنگ کے عوض میں کروڑوں روپے کی غیر قانونی وصولی کی ہے ۔تاہم معاملہ سامنے آنے کے بعد اب ان افسران پر گاج گرنی شروع ہوگئی ہے ۔ اس سلسلہ میں شہری ہوا بازی کے شعبہ میں چیف سکریٹری اجیت کمار سنگھ نے سوائی مادھوپور کے ایس پی کو نوٹس دے کر غیر قانونی طریقہ سے وصولی گئی رقم واپس جمع کرانے کو کہا ہے۔


      خیال رہے کہ وزیر اعلی وسندھرا راجے اور شہری ہوا بازی کے شعبہ کو شکایت ملی تھی کہ ریاست کی 17 سرکاری ہوائی پٹیوں پر ہوائی جہاز اتارنے پر سیاحوں سے غیر قانونی وصولی کی جا رہی ہے۔ اس میں رنتھمبور نیشنل پارک میں سیاحوں کی زیادہ آمدورفت کی وجہ سے سوائی مادھوپور میں سب سے زیادہ وصولی کی جا رہی ہے۔


      قابل ذکر ہے کہ ریاستی حکومت نے 2009 میں سرکلر کے ذریعے ایک گائڈلائن جاری کرتے ہوئے هوائي پٹيوں پر سیاحوں کے لئے ٹوکن منی لے کر لینڈگ کی اجازت دینے کا بندوبست کیا تھا۔ تاہم ٹوکن منی کے طور پر ایمبولینس کے لئے 2 ہزار، فائر بریگیڈ کے لئے 2 ہزار، صفائی کے لئے 1000 اور سیکورٹی کے لئے 5000 کی رقم جمع کروانے کا التزام کیا گیا تھا۔ خیال رہے کہ دیگر ریاستوں میں اتنی بھی رقم نہیں لی جاتی ہے اور تقریبا مفت لینڈنگ ہوتی ہے۔


      ٹوکن منی اتنی کم ہونے کے باوجود سوائی مادھوپور سمیت 17 سرکاری هوائی پٹيوں میں کسی ذاتی ایئر لائنز سے 1 لاکھ تو کسی سے ڈیڑھ لاکھ روپے تک کی غیر قانونی وصولی ہو رہی ہے۔ كمهیر میں بھی 1 لاکھ 64 ہزار چارج وصولا جارہا ہے۔ اس کے علاوہ بھی غیر قانونی طور پر نجی ٹور آپریٹروں سے وصولی کی گئی ہے۔


      وزیر اعلی اور شہری ہوا بازی محکمہ کے چیف سکریٹری اجیت کمار سنگھ کو کافی شکایتیں ملیں تھی۔ ایسے میں اب اجیت کمار سنگھ نے ایکشن لیتے ہوئے پہلے تو اس سلسلہ میں خط بھیجا مگر اب تیور مزید سخت کرتے ہوئے سوائی مادھوپور کے ایس پی کو نوٹس جاری کرکے کارروائی کے لئے کہا اور متعلقہ نجی ٹور آپریٹرز کو غیر قانونی طور پر وصول کئے گئے رقم کو لوٹانے کی ہدایت دی ہے۔


      مشہور شخصیات سے وصولی:


      سوائی مادھوپور، بھرت پور، جھالاواڑ، بانسواڑا، هميرگڑھ (بھیلواڑہ)، سروہی، ابوروڈ، جالور-نون، پھلودي، ناگور، جھنجھنو، پڈیهارا-رتنگڑھ، گنگا نگر-لال گڑھ، تھاناغازي-الور، سیکر، سوجت-پالی سمیت راجستھان کی 31 ہوائی پٹیوں پر سینکڑوں کی تعداد میں سیاح آتے ہیں ، جن سے کروڑوں روپے غیر قانونی طور پر وصول کئے گئے ہیں۔ ممبر پارلیمنٹ كےڈی سنگھ کی طیارہ کمپنی سے 1 لاکھ بیس ہزار کی رقم کی وصولی کی گئی۔ پرینکا گاندھی ائيرچارٹرڈ سروسز سے رنتھمبور آتی ہیں، ان کی اس کمپنی سے لاکھوں روپے چارج کئے گئے۔ وہیں الكیمسٹ کمپنی سے بھی لاکھوں روپے چارج کئے گئے ہے۔

      First published: