ہوم » نیوز » مغربی ہندوستان

لاک ڈاؤن کے نام پر یہ لوگ کر رہے تھے ایسا گھٹیا کام، پولیس بھی رہ گئی حیران

پولیس نے فرضی کرائم برانچ کے ایک افسر کو گرفتار کیا ہے جو کورونا کی وبا میں لاک ڈاؤن کی خلاف ورزی کے نام پر لوگوں کو ٹھگاکرتا تھا۔

  • Share this:
لاک ڈاؤن کے نام پر یہ لوگ کر رہے تھے ایسا گھٹیا کام، پولیس بھی رہ گئی حیران
پولیس نے فرضی کرائم برانچ کے ایک افسر کو گرفتار کیا ہے جو کورونا کی وبا میں لاک ڈاؤن کی خلاف ورزی کے نام پر لوگوں کو ٹھگاکرتا تھا۔

ممبئی کی دہیسر پولیس نے فرضی کرائم برانچ کے ایک افسر کو گرفتار کیا ہے جو کورونا کی وبا میں لاک ڈاؤن کی خلاف ورزی کے نام پر لوگوں کو ٹھگاکرتا تھا۔ ملزم سندیپ چندرکانت کھوت (32) دوپہر 2 بجے کے بعد ان لوگوں کو نشانہ بناتا تھا جن کے گھر اور دکان ایک ہی جگہ پر ہوتے تھے۔ جو گھر کا شٹر اٹھا کر سامان لینے یا کسی کام سے باہر جاتے تھے۔ ان لوگوں کو لاک ڈاون کی خلاف ورزی کے نام پر پیسے وصول کیا کرتا تھا۔ دہیسرایسٹ آنند نگر کا رہائشی فریادی جس کی پان کی دکان اور مکان ایک میں تھےنے شٹر اٹھا کر باتھ روم جانے کے لئے باہر نکلا تھا۔ ویسے ہی فرضی کرائم برانچ افسر نے اس شخص کو پکڑ لیا اور کہا کہ آپ نے لاک ڈاؤن کی خلاف ورزی کی ہے۔ آپ کو جرمانہ ادا کرنا پڑے گا۔


ملزم اس کی پان کی دکان سے سات ہزارروپے کا بیڑی سگریٹ پان مسالہ لے کر دوکان والے کا کالر پکڑ کرپرائیویٹ گاڑی میں بیٹھا لیا اور اسے فاؤنٹین ہوٹل کے پاس لے جاکر چاقو دکھا کر اس کی جیب سے 7000 روپےلےلیا اور اسے پیدل جانے کے لئے کہا جب متاثر ہ شخص کو شبہ ہوا کہ یہ کوئی افسر نہیں ہے تو اس نے پوچھا کہ آپ کس تھانے سے ہیں تو ملزم نے کہاکہ وہ کرائم برانچ سے ہے۔ گھر آنے کے بعد اس نے لوگوں سے پوچھ تا چھ کہ سندیپ چندرکانت کھوت کوئی کرائم برانچ کا افسر ہےتو تو پتہ چلا کہ ایسا کوئی افسر نہیں ہے۔




اس کے بعد فریادی نے دہیسر پولیس اسٹیشن میں شکایت درج کرائی۔ کیس درج ہونے کے بعد دہیسر پولیس اسٹیشن کے ڈٹیکشن افسر اوم توٹاور اور ان کی ٹیم نے سی سی ٹی وی کی مدد سے ملزم اور اس کے ساتھی کار ڈرائیور کو گرفتار کرلیا۔ ملزم کے پاس سے پولیس فرینڈ آرگنائزیشن کا شناختی کارڈ ، پولیس کا پلاسٹک اسٹک ، مہاراشٹرا پولیس کا ماسک برآمد ہوئے ہیں۔ ملزم اسی کی بنا پر لوگو ں کو لوٹاکرتا تھا۔ ملزم پرپہلے سی بھی بہت سے مقدمات درج ہیں۔
Published by: Sana Naeem
First published: May 20, 2021 07:36 PM IST