ہوم » نیوز » مغربی ہندوستان

ممبئی میں دو نابالغ بیٹیوں کی عصمت دری کرنے والا وحشی باپ گرفتار

مقامی ملاڈ پولیس نے ملزم کو اسوقت گرفتار کیا جب ملزم کے ایک پڑوسی نے پولیس کو شبہ کی بنیاد پر یہ اطلاع دی اور اس کے بعد پولیس نے اپنی کاروائی کا آغاز کیا۔

  • UNI
  • Last Updated: Nov 19, 2020 03:34 PM IST
  • Share this:
ممبئی میں دو نابالغ بیٹیوں کی عصمت دری کرنے والا وحشی باپ گرفتار
علامتی تصویر

ممبئی۔ ممبئی کے مضافاتی علاقے ملاڈ میں پولیس نے ایک ایسے وحشی درندہ صفت شخص کو گرفتار کیا ہے جو اپنی دو سگی نابالغ بیٹیوں جن کی عمر 12 اور نو سال ہے، کی گزشتہ کئی ماہ سے عصمت دری کرتا تھا اور انھیں جنسی تشدد کا نشانہ بناتا تھا۔ ملزم کی اہلیہ اسے چھو ڑ کر چلی گئی ہے اور وہ اپنی تین بچیوں کے ہمراہ علیحدہ رہتا ہے۔ مقامی ملاڈ پولیس نے ملزم کو اسوقت گرفتار کیا جب ملزم کے ایک پڑوسی نے پولیس کو  شبہ کی بنیاد پر یہ اطلاع دی اور اس کے بعد پولیس نے اپنی کاروائی کا آغاز کیا۔


اطلاعات کے مطابق 48 سالہ ملزم کو پولیس نے گرفتار کرکے اس کے خلاف تعزیرات ہند (آئی پی سی) اور بچوں کے جنسی تحفظ سے متعلق قانون پوسکو ایکٹ کی متعلقہ دفعات کے تحت مقدمہ درج کیا ہے۔ واضح رہیکہ ممبئی پولیس خواتین پر جنسی زیادتی اور جرائم کے بڑھتے ہوئے واقعات کی روک تھام کے لئے میٹنگوں کا اہتمام کرتی ہے جس کے لئے پولیس نے حال ہی میں لوگوں کو درپیش مشکلات کو دور کرنے اور انہیں آگے آنے کی ترغیب دینے کے لئے ایسے ہی ایک نشست کا اہتمام کیا تھا جس کے دوران ملزم کی پڑوسی خاتون نے پولیس کو شبہ کی بنیاد پر یہ اطلاع دی اور شکایت کی کہ اس کی رہائش گاہ کے قریب ایک باپ اپنی بیٹیوں کو جنسی زیادتی کا نشانہ بنا رہا ہے۔ اس کے بعد پولیس نے ملزم کے گھر چھاپہ مارا جس کے دوران حیرت زدہ بات یہ رہی کہ ملزم کی ایک 12 سالہ لڑکی کو عریاں حالت میں پایا گیا جسے فوری طور پر تحویل میں لیا گیا اور ملزم کو گرفتار کرلیا گیا۔


دوران تفتیش پولیس عملہ یہ جان کر حیران رہ گیا جب متاثرہ لڑکی نے یہ بتلایا کہ اس کی نو سالہ بہن کو بھی اس کے والد نے جنسی تشدد کا نشانہ بنایا ہے۔ متاثرہ لڑکیوں کا کہنا تھا کہ وہ اپنی پانچ سالہ بہن کو محفوظ رکھنے کے لئے اپنے والد کی جانب سے کی جانے والی جنسی زیادتیوں کے بارے میں خاموش رہیں۔ ملزم کو پوسکو کی خصوصی عدالت میں پیش کیا گیا جس نے اسے پولیس تحویل میں دئے جانے کا حکم جاری کیا جبکہ لڑکیوں کو بچوں کی نگہداشت کرنے والے سرکاری ادارہ کے حوالے کر دیا گیا ہے۔

Published by: Nadeem Ahmad
First published: Nov 19, 2020 03:34 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading