உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    بیٹے کی لاش کے ساتھ گھنٹوں بیٹھا رہا باپ ، نیوز18 کے رپورٹر کی مدد سے ہوئی آخری رسوم ادا

    بیٹے کی لاش کے ساتھ ایک مجبور باپ کی داستاں

    بیٹے کی لاش کے ساتھ ایک مجبور باپ کی داستاں

    گجرات میں ایک باپ اپنے بیٹے کی لاش لیکر گھنٹوں بیٹھا رہا۔وجہ تھی کہ اس کے پاس بیٹے کی آخری رسومات ادا کرنے کیلئے پیسے نہیں تھے۔بعد میں نیوز 18 گجراتی کے رپورٹر نے نگر نگم کی مدد سے ان کے بیٹے کی آخری رسوم کو ادا کرایا۔

    • Share this:
      احمدآباد۔گجرات میں ایک باپ اپنے بیٹے کی لاش لیکر گھنٹوں بیٹھا رہا۔وجہ تھی کہ اس کے پاس بیٹے کی آخری رسومات ادا کرنے کیلئے پیسے نہیں تھے۔بعد میں نیوز 18 گجراتی کے رپورٹر نے نگر نگم کی مدد سے ان کے بیٹے کی آخری رسوم کو ادا کرایا۔یہ واقعہ آنند کے امریٹھ کا ہے۔

      واضح ہو کہ دونوں ہی باپ بیٹے گجرات کے پنچ محل علاقے سے کچھ پہلے امریٹھ میں مذدوری کیلئے آئے تھے۔یہاں دونوں مزدوری کرکے اپنا پیٹ بھرتے تھے اور سڑک کے کنارے ایک جھونپڑی میں رہتے تھے۔18 مارچ کو ایک بیماری کے سبب بیٹے کی موت ہو گئی۔

      غریبی کی وجہ سے گھر میں اتنا پیسہ نہیں تھا کہ آخری رسوم کو ادا کیا جاسکے۔اس نے بیٹے کی لاش کو ایک چادر سے ڈھکا اور سڑک کنارے بیٹھ گیا۔اس دوران کئی گھنٹے گزر گئے۔مقامی لوگوں کا کہنا تھا کہ انہوں نے پولیس کے ڈر سے اس کی کوئی مدد نہیں کی۔

      اگلے دن نیوز 18 گجراتی کے رپورٹر گھن شیام پتیل کو وہاں سے گزرتے ہوئے اس بات کا پتہ چلا ۔انہوں نے بیٹے کے والد سے جانکاری لی تو رو کر ساری داستاں سنادی۔

      گھن شیام پٹیل نے مجبور باپ کی مدد کی اور نگر نگم کو اس پورے واقعے کی جانکاری دی۔نگر نگم کو جانکاری ملنے کے بعد ایک گاڑی کا انتظام کیا گیا۔اس گاڑی میں اس بیٹے کی نعش کو لے جایا گیا اور پاس کے ہی شمشان گھاٹ میں آخری رسوم کوادا کیا گیا۔
      First published: