உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    ایف ٹی آئی آئی میں ہڑتال ختم، طالب علموں کی حمایت میں 12 فلم سازوں نے ایوارڈ لوٹائے

    پونے: انڈین فلم اینڈ ٹیلی ویژن انسٹی ٹیوٹ کے طلبہ نے جہاں ایک طرف بدھ کو اپنا انشن ختم کر دیا وہیں دوسری طرف طالب علموں کی حمایت میں دیواکر بنرجی سمیت 12 فلم سازوں نے اپنے ایوارڈ واپس کر دیئے ہیں۔

    پونے: انڈین فلم اینڈ ٹیلی ویژن انسٹی ٹیوٹ کے طلبہ نے جہاں ایک طرف بدھ کو اپنا انشن ختم کر دیا وہیں دوسری طرف طالب علموں کی حمایت میں دیواکر بنرجی سمیت 12 فلم سازوں نے اپنے ایوارڈ واپس کر دیئے ہیں۔

    پونے: انڈین فلم اینڈ ٹیلی ویژن انسٹی ٹیوٹ کے طلبہ نے جہاں ایک طرف بدھ کو اپنا انشن ختم کر دیا وہیں دوسری طرف طالب علموں کی حمایت میں دیواکر بنرجی سمیت 12 فلم سازوں نے اپنے ایوارڈ واپس کر دیئے ہیں۔

    • News18
    • Last Updated :
    • Share this:

      پونے: انڈین فلم اینڈ ٹیلی ویژن انسٹی ٹیوٹ کے طلبہ نے جہاں ایک طرف بدھ کو اپنا انشن ختم کر دیا وہیں دوسری طرف طالب علموں کی حمایت میں دیواکر بنرجی سمیت 12 فلم سازوں نے اپنے ایوارڈ واپس کر دیئے ہیں۔


      انسٹی ٹیوٹ کے طلبہ اداکار اور بی جے پی کے رکن گجیندر چوہان کو اس کا صدر بنائے جانے کی مخالفت میں 12 جون سے بھوک ہڑتال پر تھے۔ ایف ٹی آئی آئی کے طلبہ نے بھلے ہی اپنا انشن ختم کر دیا ہو، لیکن ان کا کہنا ہے کہ گجیندر کی تقرری کی مخالفت جاری رہے گی۔


      جن فلم سازوں نے اپنے ایوارڈ لوٹائے ہیں ان میں پرتیک واتس، وكرانت پوار، دیباكر بنرجی، اننتپٹوردھن، نشتھ جین، کیرتی نكھوا، ہرش وردھن کلکرنی، ہری نائر، راکیش شرما، اندراني لهڑي اور ليكپكا سنگھ درئي شامل ہیں۔


      اس موقع پر دیباكر بنرجی نے کہا کہ میں چاہتا ہوں کہ ایف ٹی آئی آئی میں جو کچھ ہو رہا ہے اس کے بارے میں سب کو پتہ چلے۔ یہ سیاست پر مبنی نہیں ہے ، لیکن میں یہ ایوارڈ واپس لوٹا کر ہندوستانیوں کی توجہ اس مسئلے کی طرف متوجہ کرنا چاہتا ہوں۔


      اننت پٹوردھن نے کہا کہ ایسا نہیں ہے کہ ہم لوگ یہ سمجھ رہے ہیں کہ ہمارے ایوارڈ واپس کرنے سے حکومت اچانک بدل جائے گی۔ ہم یہاں بیٹھ کر حکومت سے اپیل نہیں کر رہے ہیں۔ ہم عوام سے اپیل کر رہے ہیں۔ اس وقت ملک میں بیداری کا وقت چل رہا ہے۔ ادیبوں نے ایوارڈ واپس لوٹائے۔ کل سائنسدانوں نے اپنے ایوارڈ واپس کئے اور ہم بھی اس بیداری کا حصہ بننا چاہتے ہیں۔


      انسٹی ٹیوٹ کے احتجاجی طلبہ نے یہاں کہا کہ وہ اپنی کلاس میں لوٹیں گے، لیکن گجیندر کی تقرری کی 'پرامن اور جمہوری طریقے سے مخالفت جاری رکھیں گے۔ طلبہ یونین کے ترجمان رنجیت نائر نے کہا کہ ہڑتال اب تیز ہو جائےگی۔ انہوں نے کہا کہ فلم سازوں اور ماہرین تعلیم کو آگے آکر ممبئی تک احتجاج لے جانا چاہئے۔


      طالب علموں نے اطلاعات و نشریات کی وزارت کے حکام کے ساتھ کئی ملاقاتیں کی، لیکن تعطل ختم نہیں ہوا۔ چوہان نے ہڑتال ختم کرنے کے لئے طلبہ کو مبارک باد دی اور کہا کہ یہ وقت کلاس میں واپس جانے کا ہے۔

      First published: