اپنا ضلع منتخب کریں۔

    گجرات: احمد آباد کی جامع مسجد کے شاہی امام نے کہا: الیکشن میں خواتین کو ٹکٹ دینا اسلام کے خلاف

    گجرات: احمد آباد کی جامع مسجد کے شاہی امام نے کہا: الیکشن میں خواتین کو ٹکٹ دینا اسلام کے خلاف ۔ تصویر : اے این آئی ۔

    گجرات: احمد آباد کی جامع مسجد کے شاہی امام نے کہا: الیکشن میں خواتین کو ٹکٹ دینا اسلام کے خلاف ۔ تصویر : اے این آئی ۔

    Gujarat : احمد آباد میں جامع مسجد کے شاہی امام شبیر احمد صدیقی نے اتوار کو کہا کہ الیکشن میں خواتین کو ٹکٹ دینا اسلام کے خلاف ہے اور یہ مذہب کو کمزور کرتا ہے ۔

    • News18 Urdu
    • Last Updated :
    • Gujarat | Ahmadabad
    • Share this:
      احمد آباد : احمد آباد میں جامع مسجد کے شاہی امام شبیر احمد صدیقی نے اتوار کو کہا کہ الیکشن میں خواتین کو ٹکٹ دینا اسلام کے خلاف ہے اور یہ مذہب کو کمزور کرتا ہے ۔ گجرات اسمبلی الیکشن کیلئے دوسرے اور آخری مرحلہ کی ووٹنگ سے پہلے یہاں پر ایک صحافیوں سے بات چیت میں شاہی امام شبیر احمد صدیقی نے کہا کہ خواتین کو نماز پڑھنے کی اجازت نہیں ہے ، کیونکہ اسلام میں ان کی ایک یقینی جگہ ہے ۔

      انہوں نے کہا کہ اگر آپ اسلام کی بات کرتے ہیں ، کیا آپ نے ایک بھی خاتون کو نماز پڑھتے ہوئے دیکھا؟ اسلام میں نماز کی بہت بڑی اہمیت ہے ، اگر اسلام میں خواتین کا لوگوں کے سامنے آنا مناسب ہوتا تو کیا انہیں سجد میں انٹری کرنے سے روکا جاتا ۔ اس کے ساتھ ہی شاہی امام نے یہ بھی سوال کیا کہ آپ کے پاس کوئی مرد نہیں ہے، جو خواتین کو ٹکٹ دے رہے ہیں ۔ انہوں نے کہا کہ اس طرح کی پہل سے ہمارا مذہب کمزور ہوگا ۔


      شاہی امام شبیر احمد صدیقی نے کہا کہ آپ نے دیکھا ہوگا کہ کرناٹک میں حجاب کا معاملہ چلا ۔ اس معاملہ پر کافی ہنگامہ ہوا ۔ ظاہر بات ہے کہ اگر آپ خواتین کو بغیر مجبوری ایم ایل اے اور کونسلر بنائیں گے تو اس سے ہم حجاب کو محفوظ نہیں رکھ پائیں گے ۔

      یہ بھی پڑھئے: گاندھی نگر میں ماں ہیرا بین سے ملنے پہنچے وزیر اعظم مودی، پاوں چھوکر لیا آشیرواد


      یہ بھی پڑھئے: اسٹیئرنگ کمیٹی کی میٹنگ کےبعد کانگریس کااعلان، 'ہاتھ سے ہاتھ جوڑیں' مہم ہوگی شروع


      شبیر احمد صدیقی نے کہا کہ میں الیکشن میں خواتین کو ٹکٹ دئے جانے کے سخت خلاف ہوں ۔ آپ مردوں کو ٹکٹ دیجئے، جہاں مجبوری نہیں ہے ۔ ہاں اگر ایسا قانون ہوتا کہ خواتین ہی اس سیٹ سے لڑسکتی ہیں تو آپ ایسا کرسکتے تھے کیونکہ مجبوری تھی، لیکن یہاں تو کوئی مجبوری نہیں ہے ۔

      اس کے علاوہ انہوں نے کہا کہ میرا ماننا ہے کہ خواتین کو یہ لوگ ٹکٹ اس لئے دے رہے ہیں، کیونکہ ان کا مقصد ہے ۔ آج کل خواتین کی زیادہ چلتی ہے، ان کی کوشش ہے کہ اگر خواتین کو قبضہ میں لے لیا جائے تو پورا کنبہ قبضہ میں آجائے گا۔ اس کے علاوہ تو کوئی مجھے دوسرا مقصد نظر نہیں آتا ہے ۔
      Published by:Imtiyaz Saqibe
      First published: