اپنا ضلع منتخب کریں۔

    کیسا ہے گجرات کی مسلم اکثریتی سیٹوں کا حال، رہ جائیں گے حیران

    Youtube Video

    اس طرح گجرات میں تقریباً 10 فیصد مسلم ووٹ ہیں۔ جس کا اثر 30 اسمبلی سیٹوں پر پڑتا ہے۔ لیکن کچھ سیٹیں ایسی ہیں جہاں مسلم ووٹروں کی تعداد 40 فیصد سے زیادہ ہے۔

    • News18 Urdu
    • Last Updated :
    • Gujarat, India
    • Share this:
      آج گجرات اسمبلی کی 182 سیٹوں کے نتائج آرہے ہیں۔ اب تک جو نتائج آئے ہیں ان میں بھارتیہ جنتا پارٹی نے زبردست برتری حاصل کی ہے۔ اس کے علاوہ ریاست میں کانگریس کی حالت اتنی خراب ہوگئی ہے کہ اس سے پہلے گزشتہ انتخابات میں اتنی بری کارکردگی کبھی نہیں دیکھنے کو ملی۔ اس خبر میں ہم آپ کو گجرات کی 10 ایسی سیٹوں کے بارے میں بتانے جارہے ہیں جہاں مسلمانوں کی تعداد زیادہ ہے۔

      اس طرح گجرات میں تقریباً 10 فیصد مسلم ووٹ ہیں۔ جس کا اثر 30 اسمبلی سیٹوں پر پڑتا ہے۔ لیکن کچھ سیٹیں ایسی ہیں جہاں مسلم ووٹروں کی تعداد 40 فیصد سے زیادہ ہے۔ ان 10 سیٹوں میں جمال پور کھڈیا، دانیلمڈا، دریا پور، واگرا، بھروچ، ویجل پور، بھوج، جمبوسر، باپو نگر اور لمبیات سیٹیں شامل ہیں۔ ایسے میں ہم آپ کو ان سیٹوں کے بارے میں بتاتے ہیں۔

      گجرات اسمبلی انتخابات کی تاریخ میں کب اور کس پارٹی نے کتنے مسلمانوں کو ٹکٹ دیا؟



      نوٹ- بھارتیہ جنتا پارٹی نے 1998 میں گجرات انتخابات کی تاریخ میں صرف ایک بار مسلم امیدوار کھڑا کیا تھا۔ جن کا نام عبدالقاضی قریشی تھا۔ انہیں کانگریس امیدوار اقبال ابراہیم نے ہرا دیا تھا۔

       

      گجرات کی 15ویں اسمبلی میں 105 نئے چہرے، 14 خواتین اور 1 مسلم MLA۔ 77 موجودہ ایم ایل اے

      خواتین کے نس بندی کیمپ کی شرمناک تصاویر، بیڈ واسٹریچر کی بجائے زمین پر لٹاکر کیا جارہا یہ


      اگر ہم اسمبلی انتخابات 2022 کی طرف دیکھیں تو کانگریس نے 6 مسلم امیدوار کھڑے کیے ہیں اور عام آدمی پارٹی نے 3 مسلم امیدوار کھڑے کیے ہیں۔
      Published by:Sana Naeem
      First published: