ہوم » نیوز » مغربی ہندوستان

نو کمیشن ، نو کرپشن اور عازمین کو تمام پریشانیوں سے نجات دلانا ہی حج کمیٹی کا اہم ایجنڈہ : سلطان احمد

حج کمیٹی آف انڈیا نے اب فیصلہ کیا ہے کہ وہ اقلیتی امور کی وزارت کی بجائے وزارت خارجہ کے تحت کام کرے گی۔ ممبئی میں منعقدہ نو منتخب حج کمیٹی کی میٹنگ میں اس بابت ایک قرار داد بھی پاس کی گئی ۔

  • Pradesh18
  • Last Updated: Jul 18, 2016 09:51 AM IST
  • Share this:
  • author image
    NEWS18-Urdu
نو کمیشن ، نو کرپشن اور عازمین کو تمام پریشانیوں سے نجات دلانا ہی حج کمیٹی کا اہم ایجنڈہ : سلطان احمد
خیال رہے کہ گزشتہ مہینے 4ستمبر کو دل کا دورہ پڑنے کی وجہ سے سابق ممبر پارلیمنٹ سلطان احمد کا انتقال ہوگیا تھا۔

ممبئی : حج کمیٹی آف انڈیا نے اب فیصلہ کیا ہے کہ وہ اقلیتی امور کی وزارت کی بجائے وزارت خارجہ کے تحت کام کرے گی۔ ممبئی میں منعقدہ نو منتخب حج کمیٹی کی میٹنگ میں اس بابت ایک قرار داد بھی پاس کی گئی ۔ ساتھ ہی ساتھ کمیٹی کے ذمہ داروں کے حج کمیٹی کو اقلیتی امور کی وزارت کے تحت کئے جانے پر تشویش کا بھی اظہار کیا ۔


کمیٹی کے وائس چیئرمین ترنمول کانگریس کے لیڈر سلطان احمد نے میٹنگ کو کئی معنوں میں اہم قرار دیا ۔ انہوں نے بتایا کہ میٹنگ میں اس بابت بھی تبادلہ خیال کیا گیا ہے کہ حج فلائٹ کو وزیر اعظم یا وزیر داخلہ ہری جھنڈی دکھاکر روانہ کریں جبکہ ریاستوں میں ریاستی وزیر اعلی ہری جھنڈی دکھائیں اور حج کمیٹی کے تمام افسران اس موقع پر موجود رہیں ۔ انہوں نے بتایا کہ حج کمیٹی کو وزارت خارجہ سے اقلیتی امور کی وزارت کو منتقل کئے جانے کے معاملہ کو تقریبا سبھی ممبران نے سنجیدگی سے لیا اور اس کی مخالفت کی ۔ ساتھ ہی ساتھ انہوں نے کہا کہ اگر ضرورت پڑی تو اس سلسلہ میں وزیر اعظم سے بھی ملاقات کی جائے گی ۔


سلطان احمد نے مزید کہا کہ ہمارا ایجنڈہ حج کو نو کمیشن ، نو کرپشن اور عازمین کو تمام پریشانیوں سے نجات دلانا ہے اور ہماری پوری کوشش ہوگی کہ تمام کام اپنے وقت مقررہ پر ہوجائیں ۔ تمام افسران اور ملازمین کو بھی ایمانداری کے ساتھ کام کرنی کی ہدایت دی گئی ۔ واضح رہے کہ گزشتہ روز سے ہی حج ویزا لگنے کا عمل شروع ہوگیا ہے اور حج کی پہلی فلائٹ چار اگست کو پرواز کرے گی ۔


میٹنگ میں حج کمیٹی کی چئیر محبوب علی قیصر ، وائس چیئرمین سلطان احمد ، وائس چیئرمین شیخ جنا اور رکن چودھری منور کے علاوہ حج کمیٹی کے سی ای او عطا الرحمان سمیت وزارت خارجہ اور اقلیتی امور کی وزارت کے متعدد سینئر لیڈران شریک ہوئے ۔
First published: Jul 18, 2016 09:30 AM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading