ہوم » نیوز » مغربی ہندوستان

خاندانی جھگڑے سے ناراض باپ نے آئس کریم میں چوہے مارنے کی دوا ملاکر بچوں کو دے دی

اس واقعے میں 5 سالہ عالیشان محمد علی انصاری کی موت ہو گئی جبکہ دیگر 7 سالہ علینہ اور 2 سالہ ارمان اسپتال میں زیر علاج ہیں دونوں کو خطرے سے باہر بتایاجاتا ہے۔ ب

  • Share this:
خاندانی جھگڑے سے ناراض باپ نے آئس کریم میں چوہے مارنے کی دوا ملاکر بچوں کو دے دی
اس واقعے میں 5 سالہ عالیشان محمد علی انصاری کی موت ہو گئی جبکہ دیگر 7 سالہ علینہ اور 2 سالہ ارمان اسپتال میں زیر علاج ہیں دونوں کو خطرے سے باہر بتایاجاتا ہے۔ ب

خاندانی جھگڑے کی وجہ سے ناراض باپ نے آئس کریم میں چوہے مارنے کی دوا ملاکر بچوں کو دےدیا۔ یہ واقعہ مانخوردعلاقے میں پیش آیا۔ اس واقعے میں 5 سالہ عالیشان محمد علی انصاری کی موت ہو گئی جبکہ دیگر 7 سالہ علینہ اور 2 سالہ ارمان اسپتال میں زیر علاج ہیں دونوں کو خطرے سے باہر بتایاجاتا ہے۔ بچوں کی والدہ نازیہ کی شکایت پر مانخورد پولیس اسٹیشن میں مقدمہ درج کیا گیا ہے۔


پولیس نے بچوں کے والد محمد علی نوشاد انصاری کے خلاف آئی پی سی کی دفعہ 302 اور 307 کے تحت مقدمہ درج کیا ہے اور مزید تفتیش کر رہی ہے۔ واقعہ کے بعد ملزم والد فرار ہے۔ اطلاع کے مطابق 25 جون کو پولیس کو فون آیا کہ تین بچوں نے زہر کھا لیا ہے .جب پولیس نے اہل خانہ سے پوچھا تو گھر کے افراد نے بتایا کہ ان بچوں نے غلطی سے کھایا۔مگر جب 29 تاریخ کو ایک بچے کی موت ہو گئی تو پولیس کو اسپتال سے فون آیا اور اس بارے میں معلومات فراہم کی گئی۔ جس کے بعد بچوں کی ماں مانخورد پولیس اسٹیشن آکر سارا معاملہ بتاتی ہے۔


اسی بنیاد پر پولیس نے اپنی شکایت درج کرکے ملزم کی تلاش شروع کردی ہے۔پرکاش چوگلے(سینئر پولیس انسپکٹر) کے ذریعہ دی گئی معلومات کے مطابق پہلے معاملے کو چھپانے کی کوشش کی گئی ، لیکن جب ایک بچہ فوت ہوگیا ، تب پوری حقیقت سامنے آگئی کہ شوہر کے جھگڑے کی وجہ سے باپ کس طرح ناراض ہوا۔ بیوی بچوں کو آئس کریم کہہ کر چوہے کی دوا کھلادیا اور اس واقعے میں ایک بچے نے دم توڑ دیا۔

Published by: Sana Naeem
First published: Jul 01, 2021 12:52 PM IST