உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    گوا میں آج سے برکس کانفرنس ، دہشت گردی کے معاملہ پر پاکستان کو الگ تھلگ کرنے کی کوشش کرے گا ہندوستان

    آٹھویں برکس کانفرنس آج سے گوا میں شروع ہو رہی ہے ۔ اس کانفرنس کے دوران چین اور روس کے صدور کی وزیر اعظم نریندر مودی کی اہم ملاقات بھی ہوگی ۔

    آٹھویں برکس کانفرنس آج سے گوا میں شروع ہو رہی ہے ۔ اس کانفرنس کے دوران چین اور روس کے صدور کی وزیر اعظم نریندر مودی کی اہم ملاقات بھی ہوگی ۔

    آٹھویں برکس کانفرنس آج سے گوا میں شروع ہو رہی ہے ۔ اس کانفرنس کے دوران چین اور روس کے صدور کی وزیر اعظم نریندر مودی کی اہم ملاقات بھی ہوگی ۔

    • Pradesh18
    • Last Updated :
    • Share this:
      نئی دہلی : آٹھویں برکس کانفرنس آج سے گوا میں شروع ہو رہی ہے ۔ اس کانفرنس کے دوران چین اور روس کے صدور کی وزیر اعظم نریندر مودی کی اہم ملاقات بھی ہوگی ۔ کانفرنس کے دوران ہندوستان کی کوشش دہشت گردی کے مسئلے کو زور شور سے اٹھانے اور عالمی برادری میں پاکستان کو الگ تھلگ کرنے کی ہوگی۔ .

      آٹھواں برکس کانفرنس اس بار کئی معنوں میں اہم بتایا جا رہا ہے ۔ ہندوستان چاہتا ہے کہ برکس کانفرنس میں تمام پانچوں اراکین برازیل ، روس ، ہندوستان ، چین اور جنوبی افریقہ پاکستان کی جانب سے ہندوستان پر ہو رہے حملوں کی مخالفت کریں ۔ وہیں ہندوستان روس کے ساتھ دفاعی معاہدوں کی اہم ڈیل بھی کرنے جا رہا ہے ۔ روس بھی اڑی دہشت گردانہ حملہ کے بعد پاکستان کے ساتھ مشترکہ فوجی مشق کر چکا ہے ، جس پر ہندوستان ناراضگی کا اظہار بھی کرچکا ہے ۔ ہند پاک تقسیم کے 69 سالوں میں روس کی پاکستان کے ساتھ یہ پہلی فوجی مشق تھی ۔

      کانفرنس میں ہندوستان کی چین سے ہونے والی بات چیت پر بھی سب کی نظریں مرکوز ہیں ۔ چین پہلے ہی کہہ چکا ہے کہ ہندوستان کی این ایس جی اور مسعود اظہر کے معاملے پر اس کا موقف پہلے کی طرح ہی رہے گا ۔  چین، ہندوستان کی این ایس جی رکنیت کی مسلسل مخالفت کر رہا ہے ۔ وہیں  چین اقوام متحدہ میں جیش محمد کے سربراہ مسعود اظہر کو دہشت گرد قرار دینے کی مخالفت بھی کرچکا ہے ۔ خیال رہے کہ پٹھان کوٹ ائیر بیس اور اڑی فوج کیمپ پر حملے میں جیش محمد کا ہی ہاتھ تھا ۔وزیر اعظم مودی کی یہ بھی کوشش ہوگی کہ اس کانفرنس کے ذریعے کساد بازاری سے برسرپیکار رکن ممالک کا حوصلہ بڑھایا جائے ۔
      First published: