உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    جے پور : ریپ کیس کی جانچ کیلئے اے سی پی نے متاثرہ سے کیا ایسا گھنونا مطالبہ ، ہوگیا گرفتار

    جے پور : ریپ کیس کی جانچ کیلئے اے سی پی نے متاثرہ سے کیا ایسا گھنونا مطالبہ ، ہوگیا گرفتار

    جے پور : ریپ کیس کی جانچ کیلئے اے سی پی نے متاثرہ سے کیا ایسا گھنونا مطالبہ ، ہوگیا گرفتار

    متاثرہ نے اے سی بی کو بتایا تھا کہ ریپ کیس کی جانچ کرنے کے عوض میں اے سی پی جسمانی تعلقات بنانے کا مطالبہ کرتا ہے ۔ شکایت صحیح پائی جانے کے بعد اے سی بی نے اے سی پی کو گرفتار کرلیا ۔

    • Share this:
      انسداد بدعنوانی بیورو نے چھٹی کے دن بدعنوانوں کے منصوبوں پر پانی پھیرتے ہوئے بڑی کارروائی کو انجام دیا ہے ۔ جے پور ، بیکانیر اور شری گنگا نگر میں اے سی بی نے الگ الگ معاملات میں تین بدعنوانوں کو رنگے ہاتھوں گرفتار کیا ہے ۔ سب سے چونکانے والی کارروائی جے پور میں ہوئی ہے ، جہاں رشوت کے بدلے جسم کا مطالبہ کرنے والے اے سی پی کو گرفتار کیا گیا ہے ۔

      اے سی بی نے جے پور پولیس کمشنریٹ کے ایسٹ ضلع میں وومین ایٹروسٹیز ریسرچ یونٹ میں تعینات اے سی پی کیلاش بوہرا کو رشوت کے بدلے جسم کا مطالبہ کرنے پر قابل اعتراض حالت میں گرفتار کیا ۔ اے سی بی ڈی جی بی ایل سونی نے بتایا کہ شکایت کنندہ نے اس بارے میں شکایت کی تھی کہ اس کے ذریعہ درج کرائے گئے آبروریزی کے کیس کی جانچ پولیس کمشنریٹ ایسٹ کی ڈبلیو اے آر یونٹ میں تعینات اے سی پی کیلاش بوہرا کررہے ہیں ۔ اس معاملہ کی جانچ کے بدلہ میں پیسہ کا مطالبہ کیا گیا اور بعد میں بطور رشوت جسم کی مانگ کی گئی ۔

      ملزم نے شکایت کنندہ کو غیرضروری طور سے دفتر کے وقت کے بعد بھی ملنے کیلئے پابند کیا تھا ۔ شکایت کے بعد اے سی بی کی ٹیم نے معاملہ کی تصدیق کرنے کے بعد آج ملزم کو قابل اعتراض حالت میں رنگے ہاتھوں گرفتار کرلیا ۔

      اے سی بی نے آج دوسری کارروائی بیکانیر میں کرتے ہوئے آبکاری انسپکٹر اور اس کے ڈرائیور کو 28 ہزار روپے کی رشوت لیتے ہوئے رنگے ہاتھوں گرفتار کیا ہے ۔ اے سی بی کے مطابق متاثرہ شخص نے شکایت کی تھی کہ اس کی شراب کی دکان پر کارروائی کا ڈر دکھا آبکاری انسپکٹر رانو سنگھ اپنے ڈرائیور دھنپت رائے کے ذریعہ سے فی ماہ سات ہزار روپے کے حساب سے دسمبر 2020 سے مارچ 2021 تک کے کل 28 ہزار روپے کا مطالبہ کرکے پریشان کررہا ہے ۔

      اس معاملہ میں شکایت کی تصدیق کرنے کے بعد اے سی بی نے کارروائی کرتے ہوئے آبکاری محکمہ کے انسپکٹر رانو سنگھ اور ڈرائیور دھنپت رام کو شکایت کنندہ سے 28 ہزار روپے رشوت لیتے ہوئے گرفتار کیا ہے۔

      اے سی بی نے تیسری کارروائی شری گنگانگر میں کی ۔ اے سی بی نے یہاں پر سب انسپکٹر کو دوہزار روپے کی رشوت لیتے ہوئے گرفتار کیا ہے ۔ اے سی بی نے بتایا کہ ایک شخص نے شکایت کی تھی کہ اس کے ذریعہ تھانہ صدر میں درج کرائی گئی شکایت پر کارروائی کیلئے سب انسپکٹر دس ہزار روپے کی رشوت مانگ رہا ہے ۔ شکایت کی تصدیق کرنے کے بعد اے سی بی نے سب انسپکٹر کو دو ہزار روپے کی رشوت لیتے ہوئے رنگے ہاتھوں گرفتار کیا ہے ۔
      Published by:Imtiyaz Saqibe
      First published: