ہوم » نیوز » امراوتی

جمعیۃ علماء کا راجستھا ن میں مسلمانوں کوبھی ریزرویشن دیئے جانے کا مطالبہ

جمعیۃ علماء راجستھان کی مجلس عاملہ میں منظورکردہ تجویزوزیراعلی اشوک گہلوت کوارسال کی گئی ہے اور2009 میں کانگریس کے انتخابی منشورمیں کئے گئےوعدے کو پورا کرنے کا مطالبہ کیا گیا۔

  • Share this:
جمعیۃ علماء کا راجستھا ن میں مسلمانوں کوبھی ریزرویشن دیئے جانے کا مطالبہ
جمعیۃ علماء راجستھان کی مجلس عاملہ کے اجلاس میں مسلم ریزرویشن کے لئے تجویز منظور

راجستھان میں گوجرسماج کو دیئے گئے ریزرویشن کے تناظرمیں جے پورمیں جمعیۃ علماء راجستھان کی مجلس عاملہ کا اجلاس ریاستی صدر قاری محمد امین کے زیر صدارت منعقد ہوا۔ اس اجلاس میں مسلم اقلیت کے لئے اس کی پسماندگی کی بنیادپرریزرویشن کا مطالبہ کیا گیا، پسماندگی کی بنیاد پرریزرویشن کا مطالبہ جمعیۃ علماء ہند تقریباً 20 سالوں سے کررہی ہے۔


جمعیۃ علماء کا کہنا ہے کہ آج کے دورمیں جس طرح اشرافیہ اورراجستھان میں گوجربراداری اسی طرح مہاراشٹرمیں مراٹھیوں کوریزرویشن دیا گیا۔ ا س سے یہ امر ثابت ہوگیا ہے کہ ریزرویشن ترقی کے دورمیں پیچھے رہ گئے لوگوں کو دیا جارہا ہے۔ ریزرویشن سے متعلق آج کے اجلاس میں ایک تجویزمنظورکی گئی، جوریاست کے وزیراعلی اشوک گہلوت کے دفترکو بھی ارسال کیا گیا ہے۔ تجویزمیں جسٹس راجندرسچراورجسٹس رنگناتھ مشرا کمیشن کی کی سفارشات کی روشنی میں مسلمانوں کے لئے ریزرویشن کا مطالبہ کیا گیا ہے۔


تجویز میں کہا گیا ہے کہ کانگریس پارٹی نے 2009 کے انتخابی منشورمیں مرکزی سطح پر اس کا وعدہ کیا تھا، اس لئے راجستھان کی سرکاراس پرعمل پیرا ہو۔ جمعیۃ علماء راجستھا ن کے جنرل سکریٹری مولانا عبدالواحد کھتری اورنائب صدرمولانا شبیراحمد نے بتایا کہ آج کے اجلا س میں اس کے علاوہ یہ بھی مطالبہ کیا گیا کہ گؤکشی کے نام پرہورہے حملوں کی روک تھام کے لئے سپریم کورٹ کے ہدایت کے مطابق ہرضلع میں نوڈل افسرکا تعین کیا جائے اورریاست میں اس کے خلاف علیحدہ قانون بنایا جائے۔

First published: Feb 15, 2019 08:39 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading