உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    Jodhpur Violence: جودھوپر میں بگڑے حالات، کشیدگی کے بعد لگایا گیا کرفیو، چپے۔چپے پر پولیس تعینات

    Youtube Video

    Jodhpur Violence on Eid ul Fitr: صورتحال کے پیش نظر جودھپور شہر کے شمال مغربی تھانہ علاقوں میں کرفیو نافذ کر دیا گیا ہے۔ کرفیو منگل کی دوپہر 1 بجے سے بدھ کی رات 12 بجے تک رہے گا۔

    • Share this:
      Jodhpur Violence: عید پر سی ایم اشوک گہلوت کے آبائی علاقے جودھپور میں کشیدگی بڑھتی جا رہی ہے۔ صورتحال کے پیش نظر جودھپور شہر کے شمال مغربی تھانہ علاقوں میں کرفیو نافذ کر دیا گیا ہے۔ کرفیو منگل کی دوپہر 1 بجے سے بدھ کی رات 12 بجے تک رہے گا۔ جودھ پور میں کشیدہ صورتحال کے پیش نظر شہر کے متاثرہ علاقے کے ہر کونے میں پولیس اور دیگر سیکورٹی فورسز کو تعینات کیا گیا ہے۔ اس کے ساتھ ساتھ شہر کے دیگر حساس علاقوں میں پولیس کی گشت بڑھا دی گئی ہے۔

      وہیں دہلی پولیس نے عید کے موقع پر قومی راجدھانی کے حساس علاقوں میں الرٹ جاری کیا ہے۔ چونکہ عید اور ہندو تہوار اکشے ترتیا ایک ہی دن ہیں۔ سکیورٹی اہلکار کسی بھی ناخوشگوار واقعے سے بچنے کے لیے تیار ہیں۔ دوسری جانب راجستھان کے جودھ پور اور جموں و کشمیر کے اننت ناگ میں پیر کی رات دیر رات دو فریقوں کے درمیان جھڑپوں کی اطلاع ملی ہے۔

      Security on Eid:جودھپور میں مذہبی جھنڈوں کو لیکر تنازع کے بعد حساس علاقوں میں الرٹ جاری




      جودھپور کے جلوری گیٹ چوراہے کے بالمکند بسا سرکل پر پیر کی رات ایک ہندو گروپ کی جانب سے جھنڈا لہرانے کے بعد مذہبی جھنڈوں کو لے کر تنازعہ حل ہو گیا تھا۔ پولیس نے دونوں کمیونٹی کے جھنڈوں کو ہٹا دیا اور ان کی جگہ ترنگا لہرایا۔ لیکن دیر رات پتھراؤ کے بعد جس میں کم از کم 4 پولیس اہلکار زخمی ہوئے، منگل کی صبح شہر میں پھر سے کشیدگی پھیل گئی۔ کیونکہ اقلیتی گروپ کے ارکان نے ہندوؤں کی طرف سے لہرائے گئے جھنڈے کو ہٹانے کی کوشش کی۔ نیوز 18 راجستھان نے اطلاع دی ہے کہ بھیڑ پر قابو پانے کے لیے پولیس نے منگل کو آنسو گیس چھوڑی اور لوگوں پر لاٹھی چارج کیا۔ حالات اب قابو میں ہیں لیکن علاقے میں پولیس کی بھاری نفری تعینات ہے۔


      پولیس کی گاڑیوں میں توڑ پھوڑ کی گئی ہے اور دونوں برادریوں کے متعدد افراد زخمی بھی ہوئے ہیں۔ کئی کو پولیس نے حراست میں لے لیا ہے۔ پیر کی رات ہونے والے اس واقعے کے بعد ضلع انتظامیہ نے کشیدگی کے ماحول کو دیکھتے ہوئے احتیاط کے طور پر جودھ پور کے اس علاقے میں انٹرنیٹ سروس بند کر دی ہے۔ جودھ پور کے ڈویژنل کمشنر ہمانشو گپتا کی طرف سے جاری کردہ حکم نامے میں کہا گیا ہے کہ جودھپور میں پیر کی دوپہر ایک بجے سے تمام انٹرنیٹ خدمات معطل کر دی جائیں گی۔ اس کے ساتھ ہی راجستھان کے کرولی ضلع میں اضافی 600 فوجیوں کو تعینات کیا گیا ہے۔ نگرانی کے لیے ڈرونز بھی تعینات کیے گئے ہیں۔
      Published by:Sana Naeem
      First published: