ہوم » نیوز » مغربی ہندوستان

مغربی بنگال انتخابات کیلئے بی جے پی کا منشور جاری ، پہلی کابینہ میٹنگ میں سی اے اے لاگو کرنے کا وعدہ

BJP Manifesto for West Bengal Assembly Elections: بی جے پی نے انتخابی منشور جاری کرنے سے پہلے ریاست میں بڑی مہم چلائی تھی اور لوگوں سے رائے مانگی تھی کہ وہ ریاست میں کس طرح کی تبدیلی چاہتے ہیں ۔ بی جے پی کے قومی صدر جے پی نڈا نے خود اس مہم کی شروعات کی تھی ۔

  • Share this:
مغربی بنگال انتخابات کیلئے بی جے پی کا منشور جاری ، پہلی کابینہ میٹنگ میں سی اے اے لاگو کرنے کا وعدہ
مغربی بنگال انتخابات کیلئے بی جے پی کا منشور جاری ، پہلی کابینہ میں سی اے اے لاگو کرنے کا وعدہ

کولکاتہ : مرکزی وزیر داخلہ امت شاہ نے مغربی بنگال اسمبلی انتخابات کیلئے بھارتیہ جنتا پارٹی کا منشور جاری کردیا ہے ۔ اس موقع پر بنگال بی جے پی کے صدر دلیپ گھوش ، کیلاش وجئے ورگیہ ، بابل سپریو ، دنیش ترویدی سمیت کئی بی جے پی لیڈران موجود تھے ۔ منشور جاری کرنے کے بعد وزیر داخلہ امت شاہ نے کہا کہ بی جے پی کی سرکاریں بننے کے بعد ہی سرکاریں اس سنکلپ پتر پر چلنے لگی ہیں ۔ شاہ نے کہا کہ ہمارے لئے سنکلپ پتر کافی اہمیت کے حامل ہیں ۔ یہ سونار بنگلہ کا سنکلپ پتر ہے ۔


امت شاہ نے کہا کہ سنکلپ پتر میں صرف اعلانات نہیں ہیں بلکہ یہ عزم ہے دنیا کی سب سے بڑی پارٹی کا ، یہ عزم ہے ملک کی  16 سے زیادہ ریاستوں میں جس کی حکومت ہے ، اس پارٹی کا ، یہ عزم ہے جس کی مکمل اکثریت سے لگاتار دو مرتبہ حکومت بنی ۔ شاہ نے کہا کہ اس منشور کا بنیادی مقصد سونار بنگلہ ہے ۔ صدیوں تک بنگال نے کئی محاذوں پر ہندوستان کی نمائندگی کی ۔ بنگال ہر سیکٹر میں آگے رہتا تھا ۔


بی جے پی کے منشور میں خواتین ، کسان ، درج فہرست ذات ، درج فہرست قبائل اور ماہی گیروں کو لے کر خاص وعدے کئے گئے ہیں ۔ اس کے ساتھ ہی مغربی بنگال کے کسانوں کیلئے کسان سمان ندھی کی بقایہ رقم دئے جانے کا وعدہ بھی بی جے پی نے اپنے انتخابی منشور میں کیا ہے ۔


انتخابی منشور کی کچھ خاص باتیں

خواتین کو نوکری میں 33 فیصد ریزرویشن ۔

کسانوں کو کسان سمان ندھی کی بقایہ 18 ہزار روپے کی رقم ، اس کے بعد مرکز کے 6000 روپے سالانہ میں ریاست کے 4000 روپے جوڑ کر 10 ہزار روپے ۔

پہلی کابینہ کی میٹنگ میں بنگال کے ہر غریب کو آیوشمان بھارت اسکیم کا فائدہ ۔

ماہی گیروں کو سالانہ چھ ہزار روپے ۔

دراندازی پر پوری طرح سے لگام ۔

ہر تہوار بے روک ٹوک منایا جائے گا ۔ کورٹ کی منظوری کی ضرورت نہیں ۔

پہلی کابینہ میں شہریت ترمیمی ایکٹ لاگو کیا جائے گا ۔

او بی سی ریزرویشن میں کئی کمیونٹیز کو جوڑا جائے گا ۔

سبھی خواتین کیلئے کے جی سے پی جی تک کی مفت تعلیم

پبلک ٹرانسپورٹ میں خواتین کیلئے مفت سفر ۔

تین نئے ایمس بنائے جائیں گے ۔

ساتواں پے کمیشن لاگو کیا جائے گا ۔

وزیر اعلی دفتر کے ماتحت اینٹی کرپشن ہیلپ لائن ۔

نوبیل ایوارڈ کی طرز پر ٹیگور ایوارڈ اور آسکر کی طرز پر ستیہ جیت رے ایوارڈ ۔

بتادیں کہ بی جے پی نے انتخابی منشور جاری کرنے سے پہلے ریاست میں بڑی مہم چلائی تھی اور لوگوں سے رائے مانگی تھی کہ وہ ریاست میں کس طرح کی تبدیلی چاہتے ہیں ۔ بی جے پی کے قومی صدر جے پی نڈا نے خود اس مہم کی شروعات کی تھی ۔
Published by: Imtiyaz Saqibe
First published: Mar 21, 2021 07:11 PM IST