ہوم » نیوز » No Category

مسلم ریزرویشن کے تعلق سے مہاراشٹرکے وزیراعلی کاگول مول جواب

ممبئی:ریاست مہاراشٹرمیں مسلمانوں کو پانچ فیصدریزرویشن دیئے جانے کے معاملے میں آج یہاں مہارشٹرکے وزیراعلی دیویندرفرنویس نے گول مول انداز جواب دیا

  • UNI
  • Last Updated: Oct 31, 2015 10:28 PM IST
  • Share this:
  • author image
    NEWS18-Urdu
مسلم ریزرویشن کے تعلق سے مہاراشٹرکے وزیراعلی کاگول مول جواب
ممبئی:ریاست مہاراشٹرمیں مسلمانوں کو پانچ فیصدریزرویشن دیئے جانے کے معاملے میں آج یہاں مہارشٹرکے وزیراعلی دیویندرفرنویس نے گول مول انداز جواب دیا

ممبئی:ریاست مہاراشٹرمیں مسلمانوں کو پانچ فیصدریزرویشن دیئے جانے کے معاملے میں آج یہاں مہارشٹرکے وزیراعلی دیویندرفرنویس نے گول مول انداز جواب دیااورکہاکہ یہ معاملہ عدالت کے روبروزیرالتواء ہے جب کہ مسلمانوں کے ہمراہ مراٹھابرادری کودیئے گئے ریزرویشن کابھی عدالت میں التواء میں پڑے رہنے کاذکرکرتے ہوئے انہوں نے کہاکہ بی جے پی قیادت والی حکومت مراٹھابرادری کوریزرویشن دیئے جانے کے حق میں ہے اوراس سلسلے میں ریاستی حکومت نے ایک کمیٹی تشکیل دی ہے جوروزبروز اس بات پرکام کررہی ہے کہ اس طرح سے مراٹھاریزرویشن میں عدالت کی منظوری حاصل ہوں۔


مہاراشٹرمیں سینابی جے پی حکومت کے ایک سال مکمل ہونے پراخباروں نویسوں سے خصوصی گفتگوکرتے ہوئے انہوں نے مسلم ریزوریشن کے تعلق سے جب یہ دریافت کیاگیا کہ ممبئی ہائی کورٹ نے مسلمانوں کوتعلیم کے معاملے میں ریزرویشن دیئے جانے کے بارے میں ہری جھنڈی دیکھلائی ہے اورسرکاری نوکریوں میں ریزرویشن دینے کے معاملے میں روک لگائی ہے۔لیکن اس کے باوجودبھی ریاستی حکومت مسلمانوں کو تعلیمی معاملات میں ریزرویشن دینے سے کیوں محروم رکھ رہی ہے۔


اس کے جواب میں دیویندرفرنویس نے کہاکہ یہ معاملہ عدالت میں زیربحث ہے لیکن اس کے باوجودبھی ان کی حکومت نے اقلیتوں کی ترقی کیلئے مختلف اقدامات کئے ہیں جس میں مولاناآزادمالیاتی فنڈکے سالانہ بجٹ میں اضافہ اور اقلیتی طلبہ کے اسکالرشپ معاوضہ میں اضافہ بھی شامل ہے۔

First published: Oct 31, 2015 10:28 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading