ہوم » نیوز » مغربی ہندوستان

مہاراشٹر : کورونا کے بڑھتے قہر کے پیش نظر ممبئی پولیس نے اٹھایا نیا قدم ، اب اس طرح لوگوں سے کررہی رابطہ

Coronaviurs in Mumbai : ممبئی پولیس کے نارتھ ریجن کے ایڈیشنل کمشنر دلیپ ساونت نے بتایا کہ ہم نے وہاٹس ایپ گروپ بھی بنائے ہیں ، جس میں ماہی گیر ، جم ، کپڑ ے کے تاجروں ، مذہبی رہنماؤں اور ملازمت پیشہ افراد کو جوڑا ہے ۔ تاکہ ہم ہر کسی کی بات سن سکیں اور اس کا حل نکال سکیں ۔

  • Share this:
مہاراشٹر : کورونا کے بڑھتے قہر کے پیش نظر ممبئی پولیس نے اٹھایا نیا قدم ، اب اس طرح لوگوں سے کررہی رابطہ
مہاراشٹر : کورونا کے بڑھتے قہر کے پیش نظر ممبئی پولیس نے اٹھایا نیا قدم ، اب اس طرح لوگوں سے کررہی رابطہ ۔ علامتی تصویر ۔

ممبئی : ممبئی میں بڑھتے ہوئے کورونا معاملات کے پیش نظر ممبئی پولیس نے اب لوگوں سے بات چیت کرنا شروع کیا ہے ۔ زوم ایپ کے ذریعہ میٹنگیں کی جارہی ہیں ۔ تاکہ لوگوں کو یہ سمجھایا جاسکے کہ ممبئی کی صورت حال کس قدرخطرناک  ہے۔ ممبئی پولیس کے ایک سینئر افسر نے بتایا کہ ہم زوم یا اسکائپ کے ذریعہ لوگوں سے میٹنگ کر رہے ہیں ۔ اس میٹنگ میں مقامی ایم ایل اے ، خوردہ فروشوں ، تاجروں ، سماجی کارکنوں ، مذہبی رہنماؤں سے رابطہ کرتے ہیں اور ان کے مسائل سنتے ہیں اور لاک ڈاون جیسی صورتحال ہوئی ، تو ہم اس کا سامنا کیسے کریں ، اس بات پر غورو فکر کررہے ہیں ۔ کئی مرتبہ لاک ڈاؤن کے وقت لوگ سڑکوں پر آتے ہیں ۔ لا اینڈ آرڈر کی صورتحال خراب ہونے لگتی ہے ۔ ان سب کو دھیان میں رکھتے ہوئے پولیس اس مرتبہ سب کو اپنے ساتھ  جوڑنا چاہتی ہے ۔


ممبئی پولیس کے نارتھ ریجن کے ایڈیشنل کمشنر دلیپ ساونت نے بتایا کہ ہم نے وہاٹس ایپ گروپ بھی  بنائے ہیں ، جس میں ماہی گیر ، جم ، کپڑ ے کے تاجروں ، مذہبی رہنماؤں اور ملازمت پیشہ افراد کو جوڑا ہے ۔ تاکہ ہم ہر کسی کی بات سن سکیں اور اس کا حل نکال سکیں ۔


ممبئی کے کل 94 پولیس اسٹیشنوں کے سینئر انسپکٹروں نے کل 188 وہاٹس ایپ گروپس بنائے ہیں ، جبکہ ممبئی میں کل 376 بیٹ چوکیاں ہیں ، جہاں  کے ہر انچارج نے کم از کم 5 گروپ بنائے ہیں اور لوگوں کو گروپ میں شامل کیا ہے ۔


اس کے علاوہ اے سی پی ، ڈی سی پی اور ایڈیشنل کمشنر کو بھی گروپ میں شامل کیا گیا ہے ۔ تاکہ وہ ہر مسئلہ کی نگرانی کر سکیں اور اس کاحل نکال سکیں۔
Published by: Imtiyaz Saqibe
First published: Apr 13, 2021 05:46 PM IST