ہوم » نیوز » مغربی ہندوستان

کووڈ۔ 19: مہاراشٹر حکومت کی بابا رام دیو کو وارننگ۔ جانچ کے بغیر نہیں بیچ سکتے کورونل

پتنجلی نے منگل کو کووڈ۔19 کی دوا کورونل ایجاد کرنے کا دعویٰ کرتے ہوئے اسے لانچ کیا تھا

  • Share this:
کووڈ۔ 19: مہاراشٹر حکومت کی بابا رام دیو کو وارننگ۔ جانچ کے بغیر نہیں بیچ سکتے کورونل
کووڈ۔ 19: مہاراشٹر حکومت کی بابا رام دیو کو وارننگ۔ جانچ کے بغیر نہیں بیچ سکتے کورونل

ممبئی۔ کورونا وائرس (Coronavirus) کی دوا کو لے کر بابا رام دیو (Swami Ramdeva)  کی مشکلیں بڑھتی جا رہی ہیں۔ مہاراشٹر کے وزیر داخلہ انل دیشمکھ (Anil Desmukh)  نے انہیں وارننگ دی ہے کہ بغیر کسی صحیح کلینکل ٹرائل کے ان کی کمپنی کو کورونا کی دوا بیچنے کی اجازت نہیں دی جائے گی۔ پتنجلی نے منگل کو COVID-19 کی دوا کورونل ایجاد کرنے کا دعویٰ کرتے ہوئے اسے لانچ کیا تھا۔ پتنجلی آیوروید کی اس دوا پر کئی لوگوں نے سوال اٹھائے ہیں۔


بابا کی کمپنی کو وارننگ


وزیر داخلہ انل دیشمکھ نے کہا کہ ایسی نقلی دوائیں مہاراشٹر میں بیچنے نہیں دی جائیں گی۔ انہوں نے ٹویٹ کیا۔ ’ نیشنل انسٹی ٹیوٹ آف میڈیکل سائنسز جئے پور یہ پتہ لگائے گی کہ کیا پتنجلی آیوروید نے کورونا دوا کے لئے کلینیکل ٹرائلس کئے تھے یا نہیں۔ میں بابا رام دیو کو سخت انتباہ دیتا ہوں کہ مہاراشٹر حکومت ایسی نقلی دوا بیچنے کی اجازت نہیں دے گی‘۔




بتا دیں کہ آیوش کی مرکزی وزارت نے اس دوا کو لے کر نوٹس لیا ہے۔ وزارت نے پتنجلی کو نوٹس بھیج کر فوری طور پر دوا کی تشہیر پر روک لگا دی ہے۔ آیوش وزارت کا کہنا تھا کہ بغیر آئی سی ایم آر کی تصدیق کے فارمیسی ایسی دوا کیسے بیچ سکتی ہے۔ مرکز نے اتراکھنڈ کے آیوش محکمہ کو بھی مکتوب بھیج کر معاملہ سے منسلک ساری جانکاری مانگی ہے۔

دعویٰ کیا جا رہا ہے کہ کمپنی کو سردی۔ زکام کی دوا بنانے کا لائسنس جاری کیا گیا تھا لیکن پتنجلی نے کورونا کی دوا بنا ڈالی۔ اسٹیٹ ڈرگ کنٹرولر نے دیو یوگ فارمیسی کو نوٹس جاری کر دیا ہے۔ نوٹس میں پوچھا گیا ہے کہ دیو یوگ فارمیسی نے کورونا کی جو دوا بنانے کا دعویٰ کیا ہے، اس کی بنیاد کیا ہے؟
First published: Jun 25, 2020 10:46 AM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading