ہوم » نیوز » مغربی ہندوستان

مالیگاوں2008 بلاسٹ کیس: سادھوی پرگیہ اورکرنل پروہت کوابھی نہیں ملی راحت

اس کیس میں چارج فریم کرنے کے لئے این آئی اے نے 5 ستمبر کی تاریخ متعین کی ہے۔

  • Share this:
مالیگاوں2008 بلاسٹ کیس: سادھوی پرگیہ اورکرنل پروہت کوابھی نہیں ملی راحت
مالیگاوں بم دھماکوں کے ملزم کرنل پروہت اور سادھوی پرگیہ سنگھ۔

مالیگاوں 2008 بلاسٹ معاملے میں سادھوی پرگیہ سنگھ اور کرنل پروہت کو فی الحال  راحت نہیں ملی ہے۔ بامبے ہائی کورٹ نے سادھوی پرگیہ سنگھ اور کرنل پروہت پر یواے پی اے کی دفعہ کے تحت الزام طے کئے جانے میں راحت کو لے کر ایک عرضی دائر کرنے کو کہا ہے۔


امکان ہے کہ اس عرضی پر منگل کو ہائی کورٹ میں سماعت ہوسکتی ہے۔ واضح رہے کہ اس کیس میں چارج فریم کرنے کے لئے ٹرائل کورٹ (این آئی اے) نے 5 ستمبر کی تاریخ متعین کی ہے۔


حال ہی میں مالیگاوں بلاسٹ کے ملزم شری کانت پروہت نے سپریم کورٹ میں عرضی بھی داخل کی ہے۔ پروہت نے عدالت کی نگرانی میں ایس آئی ٹی جانچ کا مطالبہ کیا ہے۔ پروہت نے عرضی میں کہا ہے کہ انہیں اس معاملے میں جان بوجھ کر پھنسایا گیا ہے کیونکہ وہ آئی ایس آئی ایس اور سیمی جیسی دہشت گرد تنظیموں کے پیچھے کون ہے، اس کی جانچ کررہے تھے۔


اس سے قبل 30 جولائی کو بم دھماکہ معاملہ میں ملزمہ سادھوی پرگیہ سنگھ ٹھاکرکو بامبے ہائی کورٹ سے بڑی راحت مل گئی تھی۔  ہائی کورٹ نے سادھوی کی ڈسچارج درخواست کو قبول کر لیا تھا۔ سادھوی نے مالیگاوں دھماکہ کیس سے خود کو آزاد کرانے کے لئے بامبے ہائی کورٹ میں ایک عرضی داخل کی تھی۔ جسٹس آر وی مورے اور جسٹس انوجا پربھو دیسائی کی بینچ کی موجودگی میں سادھوی پرگیہ کی عرضی سماعت کے لئے آئی۔ عرضی میں سادھوی نے ٹرائل کورٹ یعنی خصوصی این آئی اے عدالت کے ذریعہ اس کے کیس سے ڈسچارج والی عرضی کو رد کئے جانے والے آرڈر کو چیلنج کیا تھا۔
First published: Sep 03, 2018 05:04 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading