ہوم » نیوز » مغربی ہندوستان

مالیگاؤں2006 بم دھماکہ : بھگوا ملزمین کی ضمانت نامنظور، جمعیۃ علما نے مداخلت کیلئے طلب کی اجازت

ممبئی : مالیگاؤں2006 بم دھماکہ معاملے کا سامنا کررہے چار بھگوا دہشت گردوں کی ضمانت عرضداشت آج خصوصی مکوکا عدالت نے یہ کہتے ہوئے مسترد کردی کہ بادی النظر میں ملزمین کے خلاف پختہ ثبوت موجود ہیں-

  • UNI
  • Last Updated: Jun 06, 2016 10:07 PM IST
  • Share this:
  • author image
    NEWS18-Urdu
مالیگاؤں2006 بم دھماکہ : بھگوا ملزمین کی ضمانت نامنظور، جمعیۃ علما نے مداخلت کیلئے طلب کی اجازت
ممبئی : مالیگاؤں2006 بم دھماکہ معاملے کا سامنا کررہے چار بھگوا دہشت گردوں کی ضمانت عرضداشت آج خصوصی مکوکا عدالت نے یہ کہتے ہوئے مسترد کردی کہ بادی النظر میں ملزمین کے خلاف پختہ ثبوت موجود ہیں-

ممبئی : مالیگاؤں2006 بم دھماکہ معاملے کا سامنا کررہے چار بھگوا دہشت گردوں کی ضمانت عرضداشت آج خصوصی مکوکا عدالت نے یہ کہتے ہوئے مسترد کردی کہ بادی النظر میں ملزمین کے خلاف پختہ ثبوت موجود ہیں- اس معاملے میں بم دھماکہ متاثرین کی جانب سے جمعیۃ علماء مہاراشٹر (ارشد مدنی) نے بطور مداخلت کار ملزمین دھان سنگھ، منوہر نرواریہ، راجندر چودھری اور لوکیش شرما ء کو ضمانت پر رہا کئے جانے کی سخت لفظوں میں مخالفت کی تھی ۔

جمعیۃ علماء کی جانب سے ایڈوکیٹ شریف شیخ نے عدالت کوبتایا کہ متذکرہ ملزمین کے تعلق سے عدالت میں پختہ ثبوت وشواہد موجود ہیں اور ملزمین کے خلاف تحقیقاتی دستہ این آئی اے نے عینی شاہدین کے بیانات حاصل کرکے عدالت میں پیش کیئے ہیں لہذا انہیں ضمانت پر رہانہیں کیا جانا چاہئے ۔ بھگوا دہشت گردوں کو ضمانت پر رہا نہیں کئے جانے کے تعلق سے این آئی اے کے سرکاری وکیل پرکاش شیٹھی نے بھی طویل بحث کی تھی جس کے بعدآج خصوصی مکوکا جج وی وی پاٹل نے ملزمین کی ضمانت عرضداشت مسترد کردی ۔

اسی درمیان مالیگاؤں2008بم دھماکہ معاملے کے چار ملزمین سادھوی پرگیا سنگھ ٹھاکر،سدھاکر دھر دویدی، پروین ٹکلکی اور چترویدی کی ضمانت عرضداشت کی مخالفت کرنے کے لئے خصوصی مکوکا عدالت سے جمعیۃ علماء نے بطور مداخلت کار حصہ لینے کی اجازت طلب کی۔ جمعیۃ علماء کی جانب سے ایڈوکیٹ عبدالوہاب خان نے خصوصی مکوکا جج ٹیکولے کو بتایا کہ وہ بم دھماکوں کے متاثرین کی جانب سے اس معاملے میں مداخلت کار بننا چاہتے ہیں ، عدالت نے دفاعی وکیل کی عرضداشت کو اپنے ریکارڈ پر لینے کے بعد بھگوا جماعتوں سے تعلق رکھنے والے وکلاء اور قومی تفتیشی ایجنسی سے جواب طلب کیا ۔

دوران کارروائی جمعیۃ علماء کی جانب سے خصوصی عدالت میں ایڈوکیٹ شریف شیخ ،ایڈوکیٹ انصار تنبولی ، ایڈوکیٹ شاہد ندیم ، ایڈوکیٹ افضل نواز ویگر موجود تھے عدالت نے فریقین کو اپنا جواب بدھ یعنی کے8؍ جون تک داخل کرنے کے کی ہدایت دیتے ہوئے سماعت ملتوی کردی۔

First published: Jun 06, 2016 10:07 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading