உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    مسلم راشٹریہ منچ نے کی مالیگاؤں بم دھماکے میں انصاف دلانے کی بات

    مالیگاؤں۔ مسلم راشٹریہ منچ جو کہ آر ایس ایس کی ذیلی تنظیم مانی جاتی ہے، مالیگائوں بم دھماکہ 2009 کے بے قصور مسلم نوجوانوں کو مالی مدد دلوانے کے لئے اٹھ کھڑی ہوئی ہے ۔

    مالیگاؤں۔ مسلم راشٹریہ منچ جو کہ آر ایس ایس کی ذیلی تنظیم مانی جاتی ہے، مالیگائوں بم دھماکہ 2009 کے بے قصور مسلم نوجوانوں کو مالی مدد دلوانے کے لئے اٹھ کھڑی ہوئی ہے ۔

    • ETV
    • Last Updated :
    • Share this:

    مالیگاؤں۔ مسلم راشٹریہ منچ جو کہ آر ایس ایس کی ذیلی تنظیم مانی جاتی ہے، مالیگائوں بم دھماکہ 2009 کے بے قصور مسلم نوجوانوں کو مالی مدد دلوانے کے لئے اٹھ کھڑی ہوئی ہے ۔ مسلم نوجوانوں کے ساتھ بھگوا دہشت گردوں کے تعلق سے بھی ہمدردی کی بات کرتے ہوئے مسلم راشٹریہ منچ نے انہیں بھی انصاف دلانے کی بات کہی ہے ۔


    آر ایس ایس کی سربراہی میں چلنے والی مسلم راشٹریہ منچ کے قومی رابطہ کار انصاری افضال نے مالیگائوں شہر کا دورہ کرکے 2009 بم دھماکے کے بے قصور مسلم نوجوانوں سے ملاقات کی ۔ایک پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے انصاری افضال نے کہا کہ مالیگاؤں شہر کے نو مسلم نوجوانوں کو انصاف ملنا چاہیئے اور معاوضہ بھی ملنا چاہیئے ۔اسی کے ساتھ انہوں نے شہر کے دوسرے بم دھماکے کے الزام میں گرفتار سادھوی اینڈ کمپنی کے تئیں ہمدردی جتاتے ہوئےانہیں بھی انصاف دلانے کی بات کہی ۔


    مسلم راشٹریہ منچ کے عہدیداران کا یہ ماننا ہےکہ بم دھماکہ کرنے والے دہشت گردوں کی  دہشت گردی کا رنگ زعفرانی یا سبز نہیں ہوتا۔ انہیں کسی مذہب یا رنگ سے نہیں جوڑنا چاہئے ۔  یہ کانگریس حکومت کے بنائے گئے رنگ ہیں ۔ ایم آر ایم کے لیڈر نے اس وقت کی کانگریس سرکار پر نا انصافی کا الزام لگاتے ہوئے کہا کہ جیل کی سلاخوں کے پیچھے بند چاہے وہ مسلم ہو یا ہندو بے قصور ہیں ۔انہیں زبردستی جیل کی سلاخوں کے پیچھے ڈالا گیا ہے ۔  انہوں نے کہا کہ وہ ان مسلم نوجوانوں کو مالی مدد اور رشتہ داروں کو روزگارکے تعلق سے حکومت سے بات کریں گے ۔

    First published: