உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    سابق میونسپل کمشنر نے کانگریس پر مسلمانوں کے ساتھ جانبداری کا لگایا الزام

    ناندیڑ۔ ناندیڑ شہر کے کثیر مسلم آبادی والے علاقے برہم پوری میں بر سر اقتدار کانگریس پارٹی نے گھرکل کے کام محض اس وجہ سے روک دئے ہیں کیونکہ وہاں سے ایم آئی ایم کے کارپوریٹرس منتخب ہوئے تھے ۔

    ناندیڑ۔ ناندیڑ شہر کے کثیر مسلم آبادی والے علاقے برہم پوری میں بر سر اقتدار کانگریس پارٹی نے گھرکل کے کام محض اس وجہ سے روک دئے ہیں کیونکہ وہاں سے ایم آئی ایم کے کارپوریٹرس منتخب ہوئے تھے ۔

    ناندیڑ۔ ناندیڑ شہر کے کثیر مسلم آبادی والے علاقے برہم پوری میں بر سر اقتدار کانگریس پارٹی نے گھرکل کے کام محض اس وجہ سے روک دئے ہیں کیونکہ وہاں سے ایم آئی ایم کے کارپوریٹرس منتخب ہوئے تھے ۔

    • ETV
    • Last Updated :
    • Share this:

      ناندیڑ۔ ناندیڑ شہر کے کثیر مسلم آبادی والے علاقے برہم پوری میں بر سر اقتدار کانگریس پارٹی نے گھرکل کے کام محض اس وجہ سے روک دئے ہیں کیونکہ وہاں سے ایم آئی ایم کے کارپوریٹرس منتخب ہوئے تھے ۔ یہ سنسنی خیزالزام  کسی سیاست داں کا نہیں ہے بلکہ  یہ الزام  ناندیڑ کے سابق میونسپل کمشنر سوشیل کھوڑویکر نے کیا ہے ۔ اس الزام کے سامنے آنے کے بعد ایم آئی ایم قائدین نے ناندیڑ کی میئر شیلجہ سوامی کے استعفیٰ کا مطالبہ کیا ہے ۔


      ایم آئی ایم کے ریاستی دفتر پرمنعقدہ پریس کانفرنس میں سابق گروپ لیڈر شیرعلی نے میئر پر جانبداری سے کام کرنے کا الزام لگایا ہے۔ اعلیٰ عہدیدار کی جانب سے یہ انکشاف کیا گیا ہے کہ برہم پوری میں گھرکل اسکیم کے تحت تعمیراتی کاموں کو رکوانے میں کانگریس نے اہم رول ادا کیا ۔ اس علاقے میں 195کروڑ کے کام مکمل نہ کرانے میں بھی کانگریس نے روڑے اٹکائے ۔ اعلیٰ عہدیدار نے میئر پر بھی الزام لگایا تھا کہ برہم پوری کے مکانوں کی تعمیر پرمسلسل تین جنرل باڈی اجلاس میں میئر نے قرارداد پیش کرنے ہی نہیں دی ۔


      اعلیٰ عہدیدار کے ان سنگین الزامات اورانکشافات کے بعد ایم آئی ایم نے کانگریس پر تنقیدیں شروع کردی ہیں ۔ایم آئی ایم اس پورے معاملے کو کانگریس کی مسلم دشمنی کے طورپرعوام میں پیش کر رہی ہے۔

      First published: