Choose Municipal Ward
    CLICK HERE FOR DETAILED RESULTS
    ہوم » نیوز » امراوتی

    نوجوت سنگھ سدھو-امریندر سنگھ کے درمیان تلخیوں میں اضافہ، سدھو نے کہاــ"سرکار نے پیٹھ میں چھرا گھونپا"۔

    جالندھر: پنجاب کے وزیراعلیٰ کیپٹن امریندر سنگھ اور نوجوت سنگھ سدھو کے درمیان تلخیوں میں اضافہ ہوتاجارہا ہے۔ سدھو نے جمعہ کو کہاکہ 1988کے روڈ ریج معاملے میں بری کئے جانے کی ان کی اپیل پر پنجاب سرکار کی مخالفت "پیٹھ میں چھرا گھونپنے" جیسا ہے۔

    • Share this:
    • author image
      NEWS18-Urdu
    نوجوت سنگھ سدھو-امریندر سنگھ کے درمیان تلخیوں میں اضافہ، سدھو نے کہاــ
    پنجاب کے مقامی بلدیات کے وزیر نوجوت سنگھ سدھو: فائل فوٹو۔

    جالندھر: پنجاب کے وزیراعلیٰ کیپٹن امریندر سنگھ اور نوجوت سنگھ سدھو کے درمیان تلخیوں میں اضافہ ہوتاجارہا ہے۔ سدھو نے جمعہ کو کہاکہ 1988کے روڈ ریج معاملے میں بری کئے جانے کی ان کی اپیل پر پنجاب سرکار کی مخالفت "پیٹھ میں چھرا گھونپنے"جیسا ہے۔ پنجاب حکومت نے کل جمعرات کو سپریم کورٹ میں معاملے سے بری کئے جانے کی سدھو کی اپیل کی مخالفت کرتے ہوئے جسٹس چملیشور اور جسٹس سنجے کشن کول کی بنچ سے کہا تھا کہ پنجاب اور ہریانہ ہائی کورٹ کے فیصلے میں کوئی خامی نہیں ہے۔ ہائی کورٹ نے سدھو کو اس معاملے میں قصور وار قرار دیا تھا اور تین سال کی سزا سنائی تھی۔

    نوجوت سنگھ سدھو نے پنجاب حکومت کے تئیں ناراضگی کااظہار کرتے ہوئے کہا"پنجاب سرکار نے سپریم کورٹ میں جو کچھ کہا ہے کہ وہ کیوں کہا اس کا جواب یاتو خود پنجاب کے وزیراعلیٰ امریندر سنگھ دے سکتے ہیں یا پھر پنجاب کے ایڈوکیٹ جنرل"۔

    سدھو نے کہاکہ ـ"ان کے ساتھ جو کچھ ہوا ہے اور آنے والے وقت میں جو کچھ بھی ہوگا، اس کا بوجھ وہ خود اپنے کندھوں پر اٹھائیںگے۔ انہوں نے کہاکہ انہیں سپریم کورٹ پر مکمل اعتماد ہے۔ انہوں نے کہاکہ میں سرکار سے خفا ہوں، ناراض ہوں یا غصے میں ہو یا جو کچھ بھی ہوگا اس کا بوجھ وہ خود اپنے کندھوں پر اٹھائیںگے اور مجھے اس سے زیادہ کچھ نہیں بولنا ہے"۔

    جب ان سے پوچھا گیا کہ کیا وہ وزیراعلیٰ کیپٹن امریندر سنگھ سے بات کریں گے تو انہوں نے کہا"جو میرے اندر چل رہا ہے، وہ میرے اندر ہی رہے گا"۔ عام آدمی پارٹی اور اکالی دل سدھو سے استعفیٰ کا مطالبہ کررہے ہیں۔ اس پر سدھو نے کہا"اپوزیشن کی حالت بیگانی شادی میں عبداللہ دیوانہ "جیسی حالت ہوگئی ہے۔ گذشتہ 30برسوں سے عدالت کے لئے وقف ہوں اور ابھی بھی میں اپنے آپ کو عدالت عظمی کو وقف کرتا ہوں"۔

    First published: Apr 13, 2018 08:36 PM IST
    corona virus btn
    corona virus btn
    Loading