உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    آکولہ میں نائٹ کرفیو نافذ، دفعہ 144 نافذ، ضلع انتظامیہ نے بھی اب احتیاطی اقدامات میں برتی سختی

    ادھر پولیس کا کہنا ہے کہ آکولہ میں امن و قانون کی صورتحال برقرار رکھنے کے لئے تقریباً سات سو پولیس جوانوں کو تعینات کیا گیا ہے ۔ جبکہ تقریباً ساٹھ اعلیٰ پولیس اہلکار لگاتار شہر کی ہلچل پر نظر بنائے ہوئے ہیں

    ادھر پولیس کا کہنا ہے کہ آکولہ میں امن و قانون کی صورتحال برقرار رکھنے کے لئے تقریباً سات سو پولیس جوانوں کو تعینات کیا گیا ہے ۔ جبکہ تقریباً ساٹھ اعلیٰ پولیس اہلکار لگاتار شہر کی ہلچل پر نظر بنائے ہوئے ہیں

    ادھر پولیس کا کہنا ہے کہ آکولہ میں امن و قانون کی صورتحال برقرار رکھنے کے لئے تقریباً سات سو پولیس جوانوں کو تعینات کیا گیا ہے ۔ جبکہ تقریباً ساٹھ اعلیٰ پولیس اہلکار لگاتار شہر کی ہلچل پر نظر بنائے ہوئے ہیں

    • Share this:
    حالات کی نزاکت کو دیکھتے ہوئے آکولہ ضلع انتظامیہ نے بھی اب احتیاطی اقدامات میں سختی برتنا شروع کردیا ہے۔ شہر میں شام چھ بجے سے صبح سات بجے تک کرفیو لگا دیا گیا ہے جبکہ دن بھر دفعہ ایک سو چوالیس نافذ کردی گئی ہے۔ اس بیچ عوام کو ہدایت دی گئی ہے کہ وہ کسی بھی طرح کی افواہ میں یقین نہ کریں ۔ ساتھ ہی غیر قانونی اقدامات اٹھانے والوں کے خلاف سخت کارروائی کا انتباہ دیا گیا ہے ۔آکولہ میں نائٹ کرفیو نافذ شام چھ بجے سے صبح سات بجے تک کرفیو اور ایک سو چوالیس دفعہ نافذ کی گئی ہے۔

    آکولہ کے آکوٹ میں اب حالات پوری طرح قابو میں ہے۔ یہاں پر ابھی بھی پولیس بندوبست لگا ہوا ہے۔ وہیں اس پورے معاملے کی جانچ کا مطالبہ بھی کیا جارہا ہے۔ این سی پی نے الزام لگایا ہے کہ جان بوجھ کر مہاراشٹر کا ماحول خرا ب کرنے کی کوشش کی جارہی ہے۔تریپورہ معاملے کو لے کر بند کے دوران ہوئے تنازعے کے بعد ودربھ میں تقریباً تمام علاقوں میں حالات قابو میں ہے۔

    آکولہ کے آکوٹ میں اگرچہ معاملاتِ زندگی دوبارہ پٹری پر لوٹ چکی ہے ۔ البتہ پولیس کی جناب سے کاروائی کا سلسلہ شروع ہوگیا ہے۔ عوام میں اب پولیس کی کارروائی کو لے کر خوف وہراس کا ماحول ہے ۔ اس بیچ این سی پی اقلیتی سیل کی جانب سے الزام لگایا ہے کہ عام لوگوں کو گرگتاری کے بعد جلد ضمانت مل رہی ہے۔جبکہ بی جے کے لیڈران ایک ہی دن میں قید سے رہا ہو رہے ہیں ۔ان کے مطابق مہاراشٹر کا ماحول خراب کرنے کے لئے سوچی سمجھی سازش کے تحت اقدامات اٹھائے جا رہے ہیں۔

    ادھر پولیس کا کہنا ہے کہ آکولہ میں امن و قانون کی صورتحال برقرار رکھنے کے لئے تقریباً سات سو پولیس جوانوں کو تعینات کیا گیا ہے ۔ جبکہ تقریباً ساٹھ اعلیٰ پولیس اہلکار لگاتار شہر کی ہلچل پر نظر بنائے ہوئے ہیں ۔حالانکہ سیاسی سازشوں اور افواہوں کے سبب پولیس کو بھی پریشانی اٹھانی پڑ رہی ہے۔ بار بار افواہ کی وجہ سے پولیس کو ادھر سے ادھر دوڑنا پڑرہا ہے۔ سماجی اور مذہبی جماعتوں نے عوام سے امن وشا نتی بنانے کی اپیل کی ہے۔
    Published by:Sana Naeem
    First published: